1
0
Saturday 5 May 2018 گھنٹہ 18:34
کالعدم تنظیموں کا انتخابی اتحاد بنانے کی سازش شہدا کے خون سے غداری ہوگی

مولانا سمیع الحق کو متحدہ مجلس عمل کو نقصان پہنچانے کا ہدف دیا گیا ہے، پیر معصوم نقوی

مولانا سمیع الحق کو متحدہ مجلس عمل کو نقصان پہنچانے کا ہدف دیا گیا ہے، پیر معصوم نقوی
اسلام ٹائمز۔ جمعیت علماء پاکستان نیازی کے سربراہ اور نظام مصطفی محاذ کے سینیر نائب صدر قائد اہلسنت پیر معصوم حسین نقوی نے کہا ہے کہ دینی جماعتوں کے نام پر طالبان دہشتگردوں کا باپ کہلانے پر فخر کرنیوالے مولانا سمیع الحق کی طرف سے کالعدم تنظیموں کا انتخابی اتحاد بنانے کی سازش شہدا کے خون سے غداری ہوگی، قومی اداروں کی طرف سے دہشتگردی میں ملوث کالعدم تنظیموں کو نئے ناموں سے قومی دھارے میں شامل کرنے کی کوشش ملکی سلامتی اور سیاسی نظام کیخلاف سازش ہے۔ انہوں نے کہا کہ کالعدم تنظیموں کو مذہبی جماعتوں کے اتحاد کی آڑ میں تحفظ دینے والوں کا نوٹس لیا جائے، الیکشن کمشن کو آنکھیں کھلی رکھنی چاہیں۔ مولانا سمیع الحق کو دینی جماعتوں کے اتحاد متحدہ مجلس عمل کو نقصان پہنچانے کا ہدف دیا گیا ہے، اسی لئے وہ کوشش میں ہیں کہ کچھ کرکے دکھایا جائے۔ ان کا کہنا تھاکہ سیاسی اور مذہبی جماعتوں میں تقسیم در تقسیم کا عمل اتنا گہرا ہوگیا ہے کہ آئندہ انتخابات میں کئی لحاظ سے عجیب نتائج سامنے آئیں گے، جب ہر جماعت اپنی بقا کی جنگ لڑ رہی ہوگی، ایک معلق پارلیمنٹ لانے کیلئے کئی انتخابی اتحاد تشکیل دیئے جا رہے ہیں، تاکہ بڑی جماعتوں کے ووٹ تقسیم کئے جا سکیں۔ پیر معصوم نقوی نے واضح کیاکہ پاکستان کے عوام بہت سمجھدار ہیں، انتہا پسندی، نفرت اور دہشتگردی کو فروغ دینے والے گروہوں کو انتخابات میں مسترد کر دیں گے، صرف مثبت سیاست کو فروغ ملے گا۔
خبر کا کوڈ : 722620
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

خدا کا شکر کہ اس بات کو بابصیرت شخصیات اور خواص درک کرچکے ہیں که ایم ایم اے ایک اهم مذهبی سیاسی اتحاد ہے اور اسکے خلاف نام نهاد اتحاد بنا کر اس اتحاد کو ناکام دکهانے کی نادیده قوتیں کوشش کر رہی ہیں، کاش بعض نادان افراد بابائے طالبان سمیع الحق کی تائید کے بجائے بصیرت کا مظاهره کرتے!!!
منتخب