0
Wednesday 16 May 2018 18:58

جنرل شاہد عزیز داڑھی اگا کر شام گیا اور شائد وہاں مر چکا ہے، پرویز مشرف

جنرل شاہد عزیز داڑھی اگا کر شام گیا اور شائد وہاں مر چکا ہے، پرویز مشرف
اسلام ٹائمز۔  سابق آرمی چیف اور صدر پرویز مشرف نے دعویٰ کیا ہے کہ شاہد عزیز میرا رشتہ دار اور غیر متوازن شخصیت ہے، کسی کو خاص معلوم تو نہیں لیکن شاہد عزیز شاید داڑھی اگا کر شام میں گیا ہوا ہے اور یہاں تک کہ کچھ لوگ کہتے ہیں کہ وہاں مرچکا ہے۔ نجی ٹی وی چینل کے پروگرام  میں جنرل شاہد عزیز کی کتاب میں انکشافات اور کارگل ایشو کی ابتدا میں صرف چارلوگوں کو معلوم ہونے سے متعلق گفتگو کرتے ہوئے پرویز مشرف کا کہنا تھا کہ  بالکل شاہد عزیز نے 100 فیصد صحیح  کہا،  اگر آپ نے کوئی آپریشن کرنا ہے کارگل جیسا ”آپ نے ڈھنڈورا پیٹ کرنا ہے“ تاکہ وہ انڈیا آجائے ادھر اور ہم کر ہی نہ سکیں۔ شاہد عزیز سے پوچھو کیا یہ ملٹری سکھاتی ہے؟ ہمیں سیکریسی (خفیہ رکھنا) سکھاتی ہے، جس کو یہ بتاناضروری ہو، صرف اس کو بتائیں گے اور کسی کو پتہ نہیں ہونا چاہیئے، یہ ڈویژن کا کام تھا جو نارتھ ایریا کی ڈویژن ہے  تو کیوں ہم نے سب دنیا کو بتانا ہے، جہاں تک آپ شاہد عزیز کتاب کی آپ بات کر رہے ہیں،آپ شاہد عزیز کا ریفرنس نہ دیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ ’’شاہد عزیز تو میرا رشتہ دار بھی ہے، میں جانتا ہوں اسے وہ ایک اَن بیلنس آدمی ہے۔ پتہ ہے آپ کو بھی کدھر ہے وہ؟ کوئی پتہ نہیں کہ وہ داڑھی اُگا کر شاید وہ سیریا (شام )میں گیا ہوا ہے، کچھ لوگ کہتے ہیں مر گیا ہے وہاں، تو یہ ہے شاہد عزیز اور آپ نہیں جانتے کہ ایک زمانے میں یہ کیا تھا، میں جانتا ہوں کہ جب یہ میجر اور کرنل تھا، اس وقت یہ کیا کر رہا ہوتا تھا، یہ ایک ان بیلنسڈ آدمی ہے کبھی ایک طرف تو کبھی دوسری طرف۔ اب یہ لکھتا ہے تو سب شاہد عزیز شاہد عزیز کرتے تھے‘‘۔
خبر کا کوڈ : 725199
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے