اسلام ٹائمز 25 Jan 2022 گھنٹہ 22:03 https://www.islamtimes.org/ur/news/975569/ہم-سندھ-میں-لسانی-بنیادوں-پر-فسادات-کی-راہ-سب-سے-بڑی-رکاوٹ-ہیں-مصطفی-کمال -------------------------------------------------- ٹائٹل : ہم سندھ میں لسانی بنیادوں پر فسادات کی راہ میں سب سے بڑی رکاوٹ ہیں، مصطفیٰ کمال -------------------------------------------------- تاجر برادری کے نمائندوں کے اعزاز میں عشایئے سے خطاب کرتے ہوئے چیئرمین پی ایس پی نے کہا کہ ایک جانب نام نہاد مہاجر لیڈران مہاجروں کو ایک بار پھر بند گلی کی جانب دھکیل رہے ہیں تو دوسری جانب نام نہاد سندھی قوم پرست لیڈران سندھیوں کی موت کے ذمہ دار ہیں۔ متن : اسلام ٹائمز۔ پاک سرزمین پارٹی کے چیئرمین سید مصطفیٰ کمال نے کہا ہے کہ 30 جنوری کا سورج ثابت کردے گا کہ پی ایس پی سندھ کے ظالم اور متعصب حکمرانوں کے ظلم کیخلاف سیسہ پلائی دیوار ہے، صوبہ سندھ میں لسانی بنیادوں پر فسادات کی راہ میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے ورنہ جس طرح بھولو خانزادہ کے قتل پر سیاست کی گئی، اس سے صاف ظاہر ہے کہ موت کے سوداگروں کو اپنی ناکام سیاست چمکانے کے لئے لاشوں کا انتظار ہے، ایک جانب نام نہاد مہاجر لیڈران مہاجروں کو ایک بار پھر بند گلی کی جانب دھکیل رہے ہیں تو دوسری جانب نام نہاد سندھی قوم پرست لیڈران سندھیوں کی موت کے ذمہ دار ہیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے پاکستان ہاؤس میں کراچی کی تاجر برادری کے نمائندوں کے اعزاز میں پاک سرزمین بزنس فورم کی جانب سے دیئے گئے عشایئے میں خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر پارٹی صدر انیس قائم خانی، اراکینِ سینٹرل ایگزیکٹو کمیٹی و نیشنل کونسل جبکہ تاجر برادری کی جانب سے چیئرمین تاجر اتحاد کراچی عتیق میر، چیئرمین سندھ تاجر اتحاد جمیل احمد پراچہ، چیئرمین کراچی سندھ تاجر اتحاد شیخ حبیب، محمد عبداللہ بترا صدر اورنگی ٹریڈرز ایسوسی ایشن، آصف گلفام، حکیم شاہ، محمد اسلم بھٹی سمیت دیگر عمائدین شہر موجود تھے۔ مصطفیٰ کمال نے کہا کہ ملک میں خصوصاً سندھ میں احساس محرومی بہت زیادہ ہے، دشمن ہمارے مسلک، زبان اور سیاسی وابستگی کی فالٹ لائنز کے ذریعے ملک کا امن تباہ کرنا چاہتا ہے، موجودہ حکمران اپنے متعصبانہ فیصلوں سے جلتی پر تیل ڈالنے کا کام کر رہے ہیں، جو نوجوان آج خودکشی پر مجبور ہیں اگر انہوں نے ہتھیار اٹھا لیئے اور مرنے سے پہلے ظالموں کو مارنے کا فیصلہ کرلیا تو حالات کسی کے قابو میں نہیں رہیں گے، اس لئے عوام کو حق حکمرانی دینے کی ضرورت ہے، تعصب سے نکلنا ہوگا، اپنی نسلوں کے لئے ملک کو صحیح سمت میں گامزن کرنے کی ضرورت ہے جس کی جدوجہد پاک سرزمین پارٹی کر رہی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ اپنا نقصان کرکے قوم کے فائدے کے لئے پارٹی بنائی کیونکہ جہاں پہلے تھے وہاں مراعات اور عہدے مل جاتے لیکن قوم کی بھلائی نہ ہوتی، ظالموں کے خلاف مسلک، زبان یا سیاسی وابستگی سے بالاتر ہوکر قانونی کاروائی کرنی ہوگی اور مظلوم کی بھی زبان، فرقہ اور سیاسی وابستگی دیکھے بغیر انصاف فراہم کرنا ہوگا، تب ہی پاکستان آگے چل سکتا ہے، ورنہ معاشی و معاشرتی لحاظ سے تنزلی کا شکار ہوگا۔