اسلام ٹائمز 3 Feb 2023 گھنٹہ 9:07 https://www.islamtimes.org/ur/news/1039272/اہلسنت-علمائے-کرام-مشائخ-عظام-کا-دورہ-ایران-1 -------------------------------------------------- امت واحدہ پاکستان کی انسجام امت کیلئے شاندار کاوش ٹائٹل : اہلسنت علمائے کرام و مشائخ عظام کا دورہ ایران (1) -------------------------------------------------- علامہ محمد امین شہیدی کی سربراہی میں پاکستان بھر میں ہزاروں کی تعداد میں مشائخ عظام اور علمائے کرام ملت پاکستان کی خدمت میں مصروف ہیں۔ پاکستان بھر میں آل نبیؑ، اولاد علیؑ سادات عظام کا بابرکت وجود ان سرگرمیوں میں خاص مقام رکھتا ہے۔ امت واحدہ پاکستان کے زیراہتمام اہلسنت سادات علمائے و مشائخ عظام کے وفد کا علمی، ثقافتی اور سیاحتی دورہ ایران جاری ہے۔ متن : اسلام ٹائمز۔ پاکستان اور ایران دو برادر ہمسایہ ممالک ہیں۔ دونوں کے درمیان تاریخی، ثقافتی اور مذہبی رشتہ موجود ہے۔ پاکستان کے ہزاروں علماء اسلامی جمہوریہ ایران میں زیرتعلیم ہیں۔ اسلامی جمہوریہ ایران کا مقدس شہر قم علمی مرکز اور اہلبیت علہیم السلام کا گھر ہے۔ ہر سال لاکھوں کی تعداد میں پاکستانی مسلمان زیارت کے لیے ایران آتے ہیں۔ اسی طرح پاکستان سے مختلف شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والی شخصیات ایران آتی ہیں اور ایرانی وفود پاکستان جاتے ہیں۔ پاکستانی جامعات اور دینی مدارس میں ایران سے فارغ تحصیل برجستہ افراد خدمات انجام دے رہے ہیں۔ امت واحدہ پاکستان ایک ایسا پلیٹ فارم ہے، جو پاکستان میں مختلف مسالک کے درمیان انسجام اور وحدت کو فروغ دینے کے لیے سرگرم عمل ہے۔ علامہ محمد امین شہیدی کی سربراہی میں پاکستان بھر میں ہزاروں کی تعداد میں مشائخ عظام اور علمائے کرام ملت پاکستان کی خدمت میں مصروف ہیں۔ پاکستان بھر میں آل نبیؑ، اولاد علیؑ سادات عظام کا بابرکت وجود ان سرگرمیوں میں خاص مقام رکھتا ہے۔ اہلسنت مشائخ عظام و علمائے کرام کے وفد کی ایران آمد: امت واحدہ پاکستان کے زیراہتمام اہلسنت سادات علمائے و مشائخ عظام کے وفد کا علمی، ثقافتی اور سیاحتی دورہ ایران جاری ہے۔ وفد نے اسلامی جمہوریہ ایران کے مذہبی و علمی شہر قم میں دارالحدیث علمی و ثقافتی مرکز کا مطالعاتی دورہ کیا اور قرآن و حدیث یونیورسٹی قم کے شیخ الجامعہ ڈاکٹر مسعودی نے وفد سے خصوصی گفتگو کی۔ وفد کیساتھ تعارفی نشست میں بین الاقوامی امور کے ماہر ڈاکٹر بہرامی نے اپنی خصوصی گفتگو میں کہا کہ یونیورسٹی کے قیام سے اب تک 6 ہزار طلبہ فارغ التحصیل ہوچکے ہیں، قم کے علاوہ تہران اور اصفہان میں بھی کیمپس ہیں، ہم تعلیمِ قرآنی، حدیث اور ایجوکیشن و سائنس کے شعبوں میں طلبہ کی رہنمائی کرتے ہیں، یونیورسٹی کے قیام کا مقصد حقیقی قرآنی اسلامی معاشرے کا قیام عمل میں لانا ہے۔ انہوں نے کہا کہ آج دو فروی ہے، ایران میں امام خمینی کی پیرس سے آمد اور انقلاب تک یوم اللہ دہ فجر کے عنوان سے منایا جاتا ہے، تاکہ امام خمینی کی جہد مسلسل کو خراجِ تحسین پیش کیا جائے۔   شیخ الجامعہ ڈاکٹر مسعودی نے اپنی خصوصی گفتگو میں کہا کہ پاکستان ہمارا پارہ بدن ہے، علامہ اقبال کی فارسی شاعری دیگر شاعروں سے منفرد اور شاندار ہے، جہاں ہم سب کا کعبہ، کتاب دین اور نبی ایک ہیں، ایسے ہی ہمارا درد بھی مشترک ہے، یورپی ممالک میں قرآن سوزی کے افسوسناک واقعات اور اسلامی ممالک میں قرآنی معاشرہ کی عدمِ تشکیل ہم سب کا دردِ مشترک ہے، اپنی زندگیوں میں قرآن کو شامل کریں، تاکہ اسلامی معاشرے کا قیام عمل میں لایا جائے، حدیثِ رسول (ص) ہے کہ قرآن اور انسان، زمین اور بارش کی مانند ہے، جیسے بارش کا زمین پہ اثر ہوتا ہے، ایسے ہی قرآن کا انسان پہ اثر ہوتا ہے۔ نشست کے آخری حصہ میں علمائے کرام نے ڈاکٹر مسعودی سے قرآن و حدیث کی زندگی اور معاشرے میں عملدرآمد بارے سوالات بھی کیے۔ جامعہ کے بانی آیت اللہ محمد محمدی ری شہری کے درجات کی بلندی کے لیے فاتحہ خوانی بھی کی۔ قرآن و حدیث یونیورسٹی قم نمائشگاہ و کتابخانہ کا مطالعاتی دورہ: امت واحدہ پاکستان کے وفد کو دارالحدیث مرکز میں کتابخانہ، نمائشگاہ اور دیگر اہم شعبوں کا مطالعاتی دورہ کروایا گیا۔ یونیورسٹی کے شعبہ بین الملل ڈاکٹر بہرامی نے بتایا کہ یہاں قرآن و حدیث سے متعلقہ مجلے کو جمع کیا گیا ہے، دوسرے حصہ میں تھیسز کو محفوظ کیا گیا ہے، جبکہ دیگر حصہ میں نہج البلاغہ اور علم رجال کے بارے میں دنیا بھر سے کتابیں جمع کی گئی ہیں۔ یہاں اہلسنت و اہل تشیع کی قرآن و حدیث سے متعلقہ دنیا میں چھپنے والی ہر کتاب لائبریری میں موجود ہے۔ یہاں مجموعی طور پر 70ہزار کتب موجود ہیں۔ علمائے کرام نے یونیورسٹی کی علمی و تحقیقی کاوشوں کو سراہا اور اردو میں کتابوں کو دیکھ کر اظہارِ مسرت کیا۔