اسلام ٹائمز 8 May 2021 گھنٹہ 1:06 https://www.islamtimes.org/ur/news/931372/فلسطین-کی-آزادی-قریب-عنقریب-قبلہ-او-ل-صہیونیوں-کے-شکنجہ-سے-آزاد-ہوگا-علامہ-باقر-زیدی -------------------------------------------------- ٹائٹل : فلسطین کی آزادی قریب، عنقریب قبلہ اوّل صہیونیوں کے شکنجہ سے آزاد ہوگا، علامہ باقر زیدی -------------------------------------------------- کراچی میں جامع مسجد نورایمان کے باہر احتجاج سے خطاب میں ایم ڈبلیو ایم رہنما نے کہا کہ کشمیر و فلسطین میں ہونے والے ظلم و ستم پر خاموش نہیں بیٹھیں گے، عالمی برادری دوہرا معیار ترک کرے اور مسئلہ فلسطین اور کشمیر کو عوام کی امنگوں کے مطابق حل کرنے میں مثبت کردار ادا کرے۔ متن : اسلام ٹائمز۔ مجلس وحدت مسلمین پاکستان کی جانب سے ملک بھر کی طرح سندھ بھر کے تمام اضلاع میں رمضان المبارک کا آخری جمعہ یوم القدس کے عنوان سے منایا گیا۔ یوم القدس کے موقع پر سندھ بھر کے اضلاع میں بعد نماز جمعہ فلسطینیوں سے اظہار یکجہتی اور قبلہ اوّل کی بازیابی کے لئے احتجاجی مظاہرے کئے گئے جبکہ جس میں ایس او پیز کا مکمل خیال رکھا گیا۔ مرکزی احتجاجی مظاہرہ کراچی میں نور ایمان مسجد ناظم آباد کے باہر کیا گیا۔ کراچی میں مرکزی احتجاجی مظاہرے سے ایم ڈبلیو ایم سندھ کے سیکرٹری جنرل علامہ باقر زیدی، بزرگ عالم دین علامہ مرزا یوسف حسین، علامہ صادق جعفری، علامہ علی انور، علامہ ملک عباس، میر تقی ظفر اور دیگر نے خطاب کیا۔ جامعہ مسجد نور ایمان مسجد کے باہر ہونے والے احتجاجی مظاہرے میں سینکڑوں مظاہرین شریک تھے جنہوں نے ہاتھوں میں بینرز اور پلے کارڈز اٹھا رکھے تھے جن پر مردہ باد امریکہ، اسرائیل نامنظور، ہندوستان مردہ باد، فلسطین کی آزادی اور کشمیر کی آزادی پر مبنی نعرے آویزاں تھے جبکہ پنجاب حکومت مردہ باد کے نعرے بھی درج تھے۔ احتجاجی مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے علامہ باقر زیدی نے کہا کہ فلسطین کی آزادی قریب ہے اور عنقریب قبلہ اوّل صہیونیوں کے شکنجہ سے آزاد ہوگا۔ ان کا کہنا تھا کہ امریکہ فلسطین اور کشمیر میں صہیونی و بھارتھی مظالم کی سرپرستی کر رہا ہے اور خطے میں بدامنی پھیلا کر مسلم ممالک کو کمزور کرنا چاہتا ہے جبکہ پاکستان کو غیر مستحکم کرنے کی گھناؤنی سازش پر عمل پیرا ہے۔ انہوں نے کہا کہ یوم القدس مظلوموں کی حمایت اور مسلمان اقوام کے مابین اتحاد و یکجہتی کا بےمثال دن ہے۔ اس موقع پر انہوں نے ایران میں اسلامی انقلاب کے بانی امام خمینی اور پاکستان کے بانی قائداعظم محمد علی جناح کو زبردست خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ انہوں نے دنیا کو اسرائیل کے سنگین خطرے سے بروقت متنبہ کیا تھا، آج پوری دنیا اسرائیل کی دہشتگردانہ سوچ کا نشانہ بن رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کشمیر و فلسطین میں ہونے والے ظلم و ستم پر خاموش نہیں بیٹھیں گے۔ ان کا کہنا تھا عالمی برادری دوہرا معیار ترک کرے اور مسئلہ فلسطین اور کشمیر کو عوام کی امنگوں کے مطابق حل کرنے میں مثبت کردار ادا کرے۔ انہوں نے پنجاب میں عزاداروں کے خلاف بے بنیاد مقدمات قائم کرنے پر وزیراعلیٰ پنجاب کی شدید الفاظ میں مذمت کی اور کہا کہ عثمان بزدار ہوش کے ناخن لیں اور پنجاب میں ملت جعفریہ کے خلاف جاری تعصبانہ اقدامات کو فی الفور بند کریں۔ انہوں نے مزید کہا کہ وزیراعظم پاکستان عمران خان پنجاب حکومت کے متعصبانہ اور ظالمانہ رویہ کا نوٹس میں بصورت دیگر احتجاج کا سلسلہ جاری رہے گا۔ اس موقع پر شرکاء نے عثمان بزدار مردہ باد اور پنجاب حکومت مردہ باد کے نعرے لگائے۔ مظاہرین نے فلسطینی و کشمیری عوام سے یکجتہی کرتے ہوئے امریکی و اسرائیلی پرچموں سمیت بھارتی پرچم کو بھی نذر آتش کیا۔