اسلام ٹائمز 1 Aug 2022 گھنٹہ 21:12 https://www.islamtimes.org/ur/news/1007126/مکتب-اہل-بیت-ہمیں-کسی-کی-تکفیر-یا-مقدسات-توہین-اجازت-نہیں-دیتا-علامہ-ناظر-عباس-تقوی -------------------------------------------------- ٹائٹل : مکتب اہل بیتؑ ہمیں کسی کی تکفیر یا مقدسات کی توہین کی اجازت نہیں دیتا، علامہ ناظر عباس تقوی -------------------------------------------------- عشرہ محرم کی دوسری مجلس عزا سے خطاب میں ایس یو سی رہنما نے کہا کہ امام حسین علیہ السلام کی ذات تمام مسلمانوں کے لئے مرکز وحدت ہے، کسی بھی قسم کی منافرت کو ہوا دینا وطن کے ساتھ بھی بے وفائی ہے۔ متن : اسلام ٹائمز۔ شیعہ علماء کونسل پاکستان کے مرکزی رہنما علامہ سید ناظر عباس تقوی نے عشرہ محرم الحرام کی دوسری مجلس عزا سے خطاب میں کہا ہے کہ اہل سنت ہمیں دل و جان کی طرح عزیز ہیں، مکتب اہل بیت اطہار علیہم السلام ہمیں کسی کی تکفیر یا مقدسات کی توہین کی اجازت نہیں دیتا، جو لوگ دین کے نام پر بھائی کو بھائی سے لڑانا چاہتے ہیں ان کا ملت تشیع سے کوئی تعلق نہیں۔ انہوں نے بیان کرتے ہوئے کہا کہ ماہ محرم دوسروں کو امام عالی مقامؑ کی طرف دعوت دینے کا مہینہ ہے، دوسروں کے مذہبی جذبات مجروح کرکے اپنے آپ سے دور کرنے کا نہیں، امام حسین علیہ السلام کی ذات تمام مسلمانوں کے لئے مرکز وحدت ہے، کسی بھی قسم کی منافرت کو ہوا دینا وطن کے ساتھ بھی بے وفائی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ارض پاک ہمارا گھر ہے، ملت تشیع ایسے عناصر کا محاسبہ کرے گی جو ہمارے گھر میں آگ لگانا چاہتے ہیں۔ علامہ ناظر عباس تقوی نے کہا کہ کسی پر تہمت لگانا، بدعملی، قتل و غارت، دہشت گردی اور کسی کے عقائد کی تضحیک ملک کو عدم استحکام کا شکار کرنے کی سازشیں ہیں، شیعہ سنی وحدت و اخوت کے ہتھیار سے ان سازشوں کو ناکام بنائیں گے۔ انہوں نے مزید کہا کہ عراق میں بھی شیعہ سنی فسادات برپا کرکے وہاں کے امن و امان کو تباہ کرنے کی کوشش کی گئی، جسے شیعہ سنی معتدل علماء نے دانش و بصیرت سے ناکام بنایا، موجودہ حالات میں وطن عزیز کے علماء کو بھی مدبرانہ کردار ادا کرنے کی ضرورت ہے، متنازع اور اختلافی امور کی غیر ضروری تشہیر جلتی پر تیل ڈالنے کے مترادف ہے، اس ایجنڈے کے پیچھے طاغوتی و استکباری طاقتوں کے خفیہ ادارے پوری طرح متحرک ہیں، ان عالمی سازشوں کا درک کرتے ہوئے جذبات کی بجائے ہوشمندی سے کام لینا ہی حالات کا تقاضہ اور سمجھداری ہے۔