اسلام ٹائمز 19 Jan 2022 گھنٹہ 22:29 https://www.islamtimes.org/ur/news/974502/بھارت-سے-بہت-جلد-کورونا-کی-تیسری-لہر-ختم-ہوگی-ماہرین -------------------------------------------------- ٹائٹل : بھارت سے بہت جلد کورونا کی تیسری لہر ختم ہوگی، ماہرین -------------------------------------------------- جب سے بھارت کے بڑے شہروں سے تیسری لہر شروع ہوئی ہے، پہلے ان شہروں میں مریض بھی کم ہوئے ہیں، اسکے پیش نظر آنے والے چند دنوں میں ہندوستان میں حالات مکمل طور پر نارمل ہوسکتے ہیں۔ متن : اسلام ٹائمز۔ بھارت کے بڑے شہروں میں کورونا کے نئے مریض کم ہونے لگے ہیں۔ سب سے پہلے 27 دسمبر سے ملک میں نئے کیسز ممبئی میں بڑھنے لگے۔ یہاں 7 جنوری کے بعد مریض مسلسل کم ہو رہے ہیں۔ یہی رجحان اب دہلی، کولکتہ، بنگلور، چنئی اور پونے میں نظر آرہا ہے۔ ممبئی میں چوٹی تک پہنچنے میں 12 دن لگے۔ وہیں کولکتہ میں چوٹی تک پہنچنے میں 14 دن لگے۔ ان شہروں میں مثبت مریضوں  شرح بھی کم ہونا شروع ہوگئی ہے۔ اگر یہ سلسلہ جاری رہا تو 26 جنوری تک ملک بھر میں عروج پر آجائے گا۔ ماہرین کے مطابق جنوبی افریقہ میں انفیکشن کی پہلی لہر اومیکرون کی وجہ سے آئی۔ یہاں 3 ہفتوں کے بعد ہی کیسز کم ہونے لگے۔ یہی رجحان برطانیہ میں بھی رہا۔ ظاہر ہے کہ دنیا بھر میں جہاں بھی اومیکرون نے نئی لہر کا سبب بنایا تقریباً یہی رجحان دیکھا گیا ہے۔ جب سے بھارت کے بڑے شہروں سے تیسری لہر شروع ہوئی ہے، پہلے ان شہروں میں مریض بھی کم ہوئے ہیں، اس کے پیش نظر آنے والے چند دنوں میں ہندوستان میں حالات مکمل طور پر نارمل ہو سکتے ہیں۔ بھارت میں لاکھوں لوگ کووڈ ٹیسٹ کٹس خرید کر اپنا ٹیسٹ کر رہے ہیں۔ یہ اعداد و شمار کہیں درج نہیں ہیں۔ وہیں لاکھوں لوگ ٹیسٹ نہیں کروا رہے ہیں۔ وہ لوگ جو ٹیسٹ کٹس خرید کر خود معائنہ کرتے ہیں وہ لوگ ہیں جن میں علامات ضرور ہوئی ہوں گی۔ ماہرین صحت کے مطابق کورونا سے متاثرہ 90 فیصد سے زائد افراد میں علامات نہیں ہوتیں۔ اس کے مطابق روزانہ متاثر ہونے والے افراد کی تعداد اعداد و شمار سے کہیں زیادہ ہے۔ اب ڈیلٹا کی جگہ اومی کرون نے لے لی ہے، کیسز جتنی تیزی سے بڑھ رہے ہیں، اتنی ہی تیزی سے کم ہو رہے ہیں۔