0
Wednesday 5 Oct 2022 21:24

تقریب رونمائی ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘

  • جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

    جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

  • جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

    جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

  • جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

    جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

  • جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

    جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

  • جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

    جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

  • جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

    جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

  • جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

    جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

  • جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

    جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

  • جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

    جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

  • جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

    جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

  • جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

    جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

  • جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

    جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

  • جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

    جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

  • جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

    جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

  • جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

    جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

  • جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

    جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

  • جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

    جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

  • جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

    جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

  • جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

    جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

  • جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

    جسٹس حکیم امتیاز کی کتاب ’تاریخ شیعیان جموں و کشمیر‘ کی رسم رونمائی

اسلام ٹائمز۔ بھارت میں مقیم نمائندہ ولی فقیہ آقای مہدی مہدوی پور نے کشمیر دورہ کے دوران شیعہ و سنی مکتب ہائے فکر سے وابسطہ نامور علماء کرام، دانشور حضرات، مفکرین ملت، دینی جماعتوں کے نمائندوں اور عام لوگوں سے الگ الگ ملاقاتیں کیں اور معاشرے میں پنپ رہی سماجی بدعات کے خاتمے پرزور دیا۔ آقای مہدوی پور نے وادی کے معروف قانون دان، مفکر اور مصنف سابق جسٹس حکیم امتیاز حسین کی تصنیف تاریخ شیعیان کشمیر کے پہلے جلد کی رسم رونمائی کی۔ محکمہ اطلاعات کے پنڈت بھجن سوپوری آڈیٹوریم میں تاریخ شیعیان کشمیر کے پہلے جلد کی رسم رونمائی کے تقریب میں آقای مہدوی پور نے کہا کہ اللہ نے مجھے ایک مرتبہ پھر توفیق دی کہ میں نے سر زمین کشمیر جو سر زمین علم و معرفت، سر زمین شعر و ادب، سر زمین شریعت و طریقت، سر زمین عارفان بزرگ، سر زمین مفکرین اور شاعروں و عظیم ادباء کی سر زمین ہے پر قدم رکھا۔ انہوں نے جسٹس حکیم امتیاز حسین کی کاوشوں کی قدردانی کرتے ہوئے کہا کہ حکیم امتیاز ایک بلند پایہ مفکر ہے جس نے تاریخ شیعیان کشمیر تحریر کرکے ایک قابل فخر اور قابل داد کارنامہ انجام دیا۔ انہوں نے جسٹس حکیم امتیاز حسین کو مبارکباد پیش کرتے ہوئے انہیں شکریہ ادا کیا۔

آقای مہدی مہدوی پور نے رسم رونمائی کی تقریب میں مشہور و معروف عالم دین ڈاکٹر سمیر صدیقی، قد آور صحافی یوسف جمیل اور کشمیری ادب کے مایہ ناز شاعر، ادیب اور نقاد ڈاکٹر شاد رمضان کے علاوہ شیعہ و سنی مکتب ہائے فکر سے تعلق رکھنے والے درجنوں علماء کرام، دانشوروں اور صحافیوں سے ملاقاتیں کیں۔ آقای مہدی مہدوی پور نے وادی کشمیر کے نامور عالم دین اور سابق حریت چیئرمین مولانا محمد عباس انصاری کے گھر جاکر ان سے عیادت کی۔ انہوں نے مولانا انصاری کی صحتیابی کے لئے دعا کی۔ آقای مہدوی پور نے معاشرے میں پنپ رہی سماجی بدعات کے خاتمے پر زور دیتے ہوئے کہا کہ کشمیر کی سر زمین علم و معرفت، شعر و ادب اور عرفاء و اولیاء کی سر زمین ہے اس کو سماجی بدعات سے پاک و صاف رکھنے میں سماج کے ہر طبقے کو چاہیئے کہ وہ اپنا کردار ادا کرے۔ آقای مہدی مہدوی پور کے ساتھ آغا سید تقی رضوی بھی تھے۔
خبر کا کوڈ : 1017771
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش