1
Wednesday 6 Jul 2022 08:37

جمعیت امامیہ پاکستان نے ملک میں صدارتی نظام کا مطالبہ کر دیا

اسرائیل کو تسلیم کرنیوالوں کیلئے پاکستان میں کوئی جگہ نہیں ہوگی، غلام اکبر ساقی
جمعیت امامیہ پاکستان نے ملک میں صدارتی نظام کا مطالبہ کر دیا
اسلام ٹائمز۔ جمعیت امامیہ پاکستان نے ملک میں صدارتی نظام کا مطالبہ کر دیا، ہمیں متحد ہو کر اسلام اور ملک دشمن قوتوں کی سازشوں کو ناکام بنانا ہوگا، پاک فوج ملکی بقاء کی ضامن ہے۔ سربراہ جمعیت امامیہ پاکستان علامہ غلام اکبر ساقی، سیکرٹری جنرل علامہ سید محمد سبطین شیرازی نے صوبائی قیادت کے ہمراہ نیشنل پریس کلب اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ ملک کو اس وقت یکجہتی کی ضرورت ہے، ہمیں متحد ہونا ہوگا۔ سربراہ جمعیت امامیہ غلام اکبر ساقی نے کہا کہ حکومت اور انتظامیہ محرم الحرام میں عزاداری کے جلوسوں اور مجالس کو تحفظ فراہم کرنے کیلئے سکیورٹی کے بہتر انتظامات کرے، عزاداری پر کوئی قدغن برداشت نہیں کریں گے، پاکستان ہمارا ملک ہے، ہم سب ایک ہیں، ملک کے مسائل کی جڑ ہمارا موجودہ نظام ہے، اس نظام کو تبدیل کرنا ہوگا۔
 
انہوں نے کہا کہ جس نے بھی اسرائیل کو تسلیم کرنے کی حماقت کی، اس کا پاکستان میں کوئی ٹھکانہ نہیں ہوگا۔ سیکرٹری جنرل علامہ سبطین شیرازی کا کہنا تھا کہ ہمارے معاشرے میں عدم برداشت بڑھتی جا رہی ہے، جس کی وجہ سے مسائل بڑھ رہے ہیں، اتحاد کیلئے علماء کرام کو اپنا بھرپور کردار ادا کرنا ہوگا، ہم سب پاکستانی ہیں، ملکر پاکستان کو بچانا ہے، ہمیں متحد ہو کر اسلام اور ملک دشمن قوتوں کی سازشوں کو ناکام بنانا ہوگا۔ رہنماوں نے کہا کہ ملک میں ہمیں صدارتی نظام کی ضرورت ہے، تب ہی یہ ملک ترقی کرسکتا ہے۔ اس موقع پر صوبائی قیادت بھی موجود تھی۔
خبر کا کوڈ : 1003001
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش