0
Monday 26 Sep 2022 16:02

تعلیمی اداروں میں منشیات فروشی پر عمرقید کی سزا کیلئے قانون سازی

تعلیمی اداروں میں منشیات فروشی پر عمرقید کی سزا کیلئے قانون سازی
اسلام ٹائمز۔ پنجاب کے تعلیمی اداروں میں منشیات فروشی کے تدارک کیلئے پنجاب حکومت خصوصی اقدامات کر رہی ہے۔ اس حوالے سے وزیراعلیٰ پنجاب چودھری پرویزالٰہی نے سابق وزیراعظم عمران خان سے ملاقات میں کہا کہ  کالجز، یونیورسٹیز میں منشیات فروشی پر عمر قید تک کی سزا کیلئے قانون سازی کر رہے ہیں۔ چیئرمین پاکستان تحریک انصاف اور  سابق وزیراعظم عمران خان ایک روزہ دورے پر لاہور ہیں، عمران خان ایوان وزیراعلیٰ پہنچے جہاں چودھری پرویز الٰہی نے ان سے ملاقات کی۔ ملاقات میں سیاسی صورتحال، پنجاب کے عوام کو ریلیف دینے کے اقدامات پر بات چیت کی گئی۔ دونوں رہنماؤں میں ملاقات کے دوران پنجاب میں ترقیاتی منصوبوں اور عوام کے مسائل کے فوری حل کے لائحہ عمل پر بھی گفتگو کی گئی۔
 
چودھری پرویز الہٰی نے تعلیمی اداروں میں منشیات کے خاتمے کیلئے قانون سازی پر عمران خان کو بریف کیا اور بتایا کہ تعلیمی اداروں کو منشیات سے پاک کرنے کیلئے کڑی قانون سازی کی جا رہی ہے، کالجز اور یونیورسٹیز وغیرہ میں منشیات فروشی پر سخت سزائیں تجویز کر رہے ہیں، کم از کم سزا دو سال اور زیادہ سے زیادہ عمر قید تک رکھنے کیلئے قانون سازی کی جا رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ تعلیمی اداروں میں منشیات فروشی اور استعمال پر ادارے کے مالکان اورملازمین بھی ذمہ دار ہوں گے، منشیات فروشی کے سدباب کیلئے خودمختار ادارہ اور سپیشل کورٹس قائم کریں گے۔ اس موقع پر عمران خان نے سیلاب زدگان کی بحالی و آبادکاری کیلئے پنجاب حکومت کے اقدامات کی تعریف کی۔
 
عمران خان نے پنجاب کے عوام کو ریلیف دینے کیلئے تمام تر کاوشیں بروئے کار لانے کی ہدایت دی اور کہا کہ پنجاب حکومت کے مالی امداد کے پیکج سے سیلاب متاثرین کی بحالی و آبادکاری جلد ممکن ہوگی، ہمارے انقلابی فلاحی پروگرامز کو روک کر صوبے کے عوام سے زیادتی کی گئی، بلاتاخیرفلاح عامہ کے پروگراموں کو تیزی سے آگے بڑھایا جائے۔ سابق وزیراعظم نے  پنجاب کے تمام ہسپتالوں میں سولر پینلز لگانے کا فیصلہ کیا ہے، ہسپتالوں کو مرحلہ وار پروگرام کے تحت سولر انرجی پر منتقل کیا جائے گا۔
خبر کا کوڈ : 1016224
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش