0
Wednesday 5 Oct 2022 21:29

پشاور، عمران خان کی ارکان اسمبلی سے ملاقات کی اندرونی کہانی سامنے آگئی

پشاور، عمران خان کی ارکان اسمبلی سے ملاقات کی اندرونی کہانی سامنے آگئی
اسلام ٹائمز۔ پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے سربراہ عمران خان کی پشاور میں ارکان اسمبلی سے ملاقات کی اندرونی کہانی سامنے آگئی۔ ذرائع کے مطابق عمران خان نے ارکان اسمبلی کو مخلتف ذمہ داریاں سونپتے ہوئے ایم این ایز اور ایم پی ایز کو اپنے اپنے حلقوں سے کارکنان لانے کے احکامات جاری کیے۔ پارٹی ذرائع کا کہنا ہے کہ آزادی مارچ میں کارکنوں کو لانے لے جانے کھانے پینے کا خرچہ ارکان اسمبلی برداشت کریں گے جبکہ ایک ایم پی اے اور ایم این اے کو کم از کم ایک ہزار افراد لانے کا ہدف دیا گیا ہے۔ ذرائع کا مزید کہنا تھا کہ آنے والے کارکنوں کی باقاعدہ فہرست بنائی جائے گی جبکہ آئندہ عام انتخابات میں پارٹی ٹکٹ کارکردگی سے مشروط ہوگا۔ قبل ازیں پشاور میں عمران خان نے پارٹی عہدیداروں سے خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ حکومت نے نیب میں اپنا بندہ بٹھایاہوا ہے، تاکہ مرضی کے فیصلے کروا سکیں، چوری کے تمام کیسز معاف ہو رہے ہیں جو قوم کے ساتھ مذاق ہے۔

گزشتہ دنوں چیئرمین عمران خان نے اپنی زیر نگرانی پی ٹی آئی کے رہنماؤں اور عہدیداران سے آزادی مارچ میں بھرپور شرکت اور کامیابی کے لیے حلف اٹھوایا تھا، جس میں پی ٹی آئی کی صوبائی قیادت، ضلعی وتحصیل عہدیداران بھی شامل تھے۔ تقریب میں سابق گورنر خیبر پختونخوا شاہ فرمان نے شرکاء سے حلف لیا جبکہ اس دوران اسٹیج پر پرویز خٹک، علی امین گنڈا پور سمیت دیگر قائدین موجود تھے۔ حلف کے متن میں کہا گیا تھا کہ ’’ہم اللہ کو حاضر ناظر جان کر کہتے ہیں کہ ملک کی خودمختاری کے لیے کسی بھی قربانی دریغ نہیں کریں گے اور ہم حقیقی آزادی تحریک کو جہاد سمجھ کر اس میں حصہ لیں گے‘‘۔
خبر کا کوڈ : 1017797
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش