0
Wednesday 5 Oct 2022 23:06

لٹیروں کیخلاف ہر فورم پر آواز اُٹھائیں گے، مولانا عبدالحق ہاشمی

لٹیروں کیخلاف ہر فورم پر آواز اُٹھائیں گے، مولانا عبدالحق ہاشمی
اسلام ٹائمز۔ امیر جماعت اسلامی بلوچستان مولانا عبدالحق ہاشمی نے کہا کہ بلوچستان میں حکومت میں شامل ہونے، باریاں بدلنے اور کرسی ومفادات کا کھیل جاری ہے۔ عوام، متاثرین سیلاب کی پریشانیوں کی حکومت و اپوزیشن کو کوئی فکر نہیں۔ ممبران اسمبلی اور وزراء کی کارکردگی اخباری بیانات تک محدود ہے۔ جب تک نظام کی تبدیلی کیلئے دیانت دار لوگ سامنے نہیں آئیں گے، مسائل میں کمی کے بجائے اضافہ ہوگا۔ جماعت اسلامی نے حکومت میں نہ ہونے کے باوجود عوام کی ہر مصیبت و پریشانی میں دیانت کے ساتھ بہترین خدمت کی۔ ممبران اسمبلی و حکومت کی غفلت و کوتاہی اور بدعنوانی کے خلاف اور عوامی مسائل کے حل، عوام کی خدمت کرنے کیلئے ہماری جدوجہد جاری رہے گی۔ انہوں نے کہا کہ اتحادی حکومت اور فرینڈلی اپوزیشن کو عوامی مسائل، سیلاب متاثرین کی پریشانیوں سے کوئی سروکار نہیں۔

سب اپنی ناکامیوں اور نااہلی کو چھپانے کے لیے نوراکشتی کر رہے ہیں اور آس و اُمید میں ہیں کہ اسٹیبلشمنٹ کی سرپرستی مل جائے۔ سیاسی اور پارٹی مفادات کی ہر قیمت پر ترجیح کا کلچر قانون کو پامال کر رہا ہے۔ عدالتوں کی ساکھ بُری طرح متاثر کی جارہی ہے۔ اسی وجہ سے ملک قدم بقدم انارکی کی طرف دھکیلا جارہا ہے۔ عوام مفاد پرست سیاست اور نااہل حکمران ٹولوں کو مسترد کر دیں۔ جماعت اسلامی آئین، آزاد عدلیہ کے تحفظ اور قانون کی حکمرانی کی جنگ لڑے گی اور جنگ جیتے گی۔ اشیاء خورونوش، بجلی، پٹرول، زرعی ادویات، بیج، کھاد کی ہوشربا قیمتیں عوام الناس، زراعت اور کسانوں کی تباہی کا باعث ہے۔ سیلاب نے متاثرہ علاقوں میں زرعی زمینوں اور باغات و مال مویشی تباہ کردیئے ہیں۔

مگر حکمرانوں کو متاثرہ عوام کی کوئی فکر نہیں۔ جماعت اسلامی قوم کو ساتھ ملا کر ان لٹیروں کے خلاف ہر فورم پر آواز اُٹھائیگی۔ عوام کو قوم و مذہب کے نام پر بار بار بے وقوف بنایا گیا۔ ذاتی تجوریاں تو بھر گئی لیکن اسلامی نظام نافذ ہوا نہ قوم کو حقوق مل گیے۔ جماعت اسلامی مظلوم عوام، تاجر کسان سمیت ہر طبقے کی توانا آواز بن کر ملک کو دیانت دار قیادت دے کر عوامی مسائل حل اور اسلامی نظام نافذ کریگی۔ سیلاب متاثرین کے مسائل روز بروز بڑھ رہے ہیں اور موسم سرما شروع ہوتے ہی اس میں مزید اضافہ ہوگا، جبکہ دوسری جانب وفاقی و صوبائی حکومتیں اور ان کی خدمات کے ادارے غائب، غافل و بدعنوانی میں مصروف ہیں۔ سیلاب متاثرین بحالی کے لیے شفاف اور اصول و میرٹ پر امداد کے منتظر ہیں۔
خبر کا کوڈ : 1017811
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش