0
Friday 18 Nov 2022 19:44

دین کو تحت پر لانا ہی علامہ خادم رضوی کا نظریہ تھا، اسی پر عمل پیرا ہیں، سعد رضوی

دین کو تحت پر لانا ہی علامہ خادم رضوی کا نظریہ تھا، اسی پر عمل پیرا ہیں، سعد رضوی
اسلام ٹائمز۔ تحریک لبیک پاکستان کے امیر حافظ سعد حسین رضوی نے اراکینِ مجلس شوریٰ کے ہمراہ لاہور میں پریس کانفرنس میں کہا کہ امیر تحریک علامہ خادم حسین رضوی کے عرس کی تقریبات اپنے شیڈول کے مطابق جاری رہیں گی، عرس کی تقریبات کا مقصد خادم حسین رضوی کے افکار کو عوام تک پہنچانا ہے، تین روزہ عرس کی تقریبات میں بین الاقوامی و قومی سطح کی شخصیات کو مدعو کیا ہے، خادم حسین رضوی کی آواز اور تصویر کو دبانے اور مٹانے کی کوشش کی گئی۔ انہوں نے کہا کہ کشمیر کی فروخت اسی ٹینور میں ہوئی ہے، آرمی چیف کی تعیناتی وزیراعظم کا صوابدیدی حق ہے، مہنگائی بیروزگاری کی بنیادی وجہ پاکستان بننے کے اصول سے انحراف ہے، جب تک لاالہٰ کی بنیاد پر حکومت قائم نہیں ہوگی ایسے ہی رہے گا۔

انہوں نے کہا کہ انتخابات اپنے مقررہ وقت پر ہونے چاہئیں، ملک میں جب مالک جیسی فلم نہیں چل سکی تو جوائے لینڈ کیسے چلے گی۔ حافظ سعد رضوی نے کہا کہ علامہ خادم حسین رضوی کا نظریہ تھا کہ ہر ممکن دستیاب پلیٹ فارم پر دین کو تخت پہ لانے کی بات کی جائے، اس نظریے پر عمل کرتے ہوئے ہم ان کے عرس کی تقریب میں بھی دین کو تخت پہ لانے کی بات کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ جوائے لینڈ فلم اسلامی اصولوں کیخلاف ہے، پاکستانی سماج میں ایسی فلموں کی نمائش کی اجازت دینا آگ سے کھیلنے کے مترادف ہے، ملک پر ٹرانسجینڈر سیاستدانوں کا راج ہے، عمران خان سمیت آج تک جتنی بھی حکومتی آئیں سب امپورٹڈ ہیں۔
خبر کا کوڈ : 1025337
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش