0
Thursday 30 Jul 2015 23:41

گلگت بلتستان میں گرفتار کارکنوں کو رہا نہ کیا گیا تو ملک گیر احتجاجی تحریک چلانے پر مجبور ہوں گے، آئی ایس او راولپنڈی

گلگت بلتستان میں گرفتار کارکنوں کو رہا نہ کیا گیا تو ملک گیر احتجاجی تحریک چلانے پر مجبور ہوں گے، آئی ایس او راولپنڈی
اسلام ٹائمز۔ امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان راولپنڈی ڈویژن کے صدر وفا عباس نقوی نے کہا ہے کہ گلگت بلتستان میں امامیہ سٹوڈنٹس آرگنائزیشن کے گرفتار ڈویژنل صدر جمال اور دیگر اسیران کو فی الفور رہا کیا جائے اور ان کے خلاف مقدمات ختم کیے جائیں، یمن کے حوالے سے افواج پاک کے موقف کی تائید اور پاکستان کو غیرجانبدار رکھنے کے لیے نکالی جانے والے ریلی کا ہمیں آئینی و قانونی حق حاصل تھا اگر کارکنان کو فوری طور پر رہا نہ کیا گیا تو ملک گیر احتجاج کیا جائے گا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے راولپنڈی میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ وفا نقوی نے کہا کہ ہمارا یہ موقف جذبہ حب الوطنی کے عین متقاضی ہے کہ افواج پاکستان کو وطن عزیز میں مختلف محاذوں کا سامنا ہے ایسی صورتحال میں ہم کسی پرائی جنگ کا حصہ بننے کے متحمل نہیں ہو سکتے۔ دو مسلم ممالک کے درمیان تنازعہ کی صورت میں آئین ہمیں صرف ثالثی کا کردار ادا کرنے کی اجازت دیتا ہے نہ کہ فریق بننے کی۔

انہوں نے کہا کہ ہم ایک پرامن قوم ہیں اور اپنے حقوق کے حصول کے لیے جدوجہد اور اظہار رائے کی آزادی ہمارا آئینی حق ہے جس سے روکنا بلاجواز اور آئین پاکستان سے انحراف ہے۔ گلگت بلتستان آئی ایس او کے ڈویژنل صدر جمال اختر اور مجلس وحدت المسلمین کے کارکنان کو گرفتار گیا جو سرا سر زیادتی، بدنیتی اور سیاسی دباؤ کا نتیجہ ہے۔ آج ملک بھر میں آئی ایس او پاکستان کے زیر اہتمام بعد از نماز جمعہ احتجاجی مظاہرے کیے جائیں گے اور اسی سلسلے میں راولپنڈی ڈویژن کے زیراہتمام آج بعد نماز جمعہ 2.00 بجے نیشنل پریس کلب کے سامنے احتجاجی مظاہرہ ہو گا۔
خبر کا کوڈ : 477017
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب