0
Monday 21 Dec 2015 19:09

مجھے بتایا جائے کہ سندھ میں ایسا کیا ہوا کہ گورنر راج لگا دیا جائے، وزیراعلیٰ سندھ

مجھے بتایا جائے کہ سندھ میں ایسا کیا ہوا کہ گورنر راج لگا دیا جائے، وزیراعلیٰ سندھ
اسلام ٹائمز۔ وزیراعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ نے کہا ہے کہ رینجرز کو اختیارات دینے میں دیر ضرور ہوئی، لیکن اس کا یہ مطلب نہیں کہ صوبے میں گورنر راج لگا دیا جائے۔ شکارپور میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ نے کہا کہ رینجرز کو اختیارات دہشتگردی، ٹارگٹ کلنگ اور اغواء برائے تاوان روکنے کیلئے دیئے گئے تھے، اور اس میں کوئی شک نہیں کہ کراچی سمیت سندھ بھر میں آپریشن کے بعد حالات بہت بہتر ہوئے، لیکن دوبارہ اختیارات دینے میں تاخیر کا مخالفین نے فائدہ اٹھاتے ہوئے سیاست شروع کر دی، اور پیپلز پارٹی کے خلاف گرینڈ الائنس بنایا جا رہا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ماضی میں بھی اس طرح کے گرینڈ الائنسز بنتے رہے ہیں، لیکن ہمیں کوئی فرق نہیں پڑا اور نہ اب کوئی پرواہ ہے۔ وزیراعلیٰ سندھ کا کہنا تھا کہ کچھ لوگ سندھ میں گورنر راج کی باتیں کر رہے ہیں، مجھے بتایا جائے کہ ایسا کیا ہوا ہے، جس کے پیش نظر سندھ میں گورنر راج لگایا جائے، رینجرز کو اختیارات نہ دینے کی وجہ سے کیا گورنر راج لگایا جا سکتا ہے، رینجرز کو اختیارات دینے میں تاخیر ضرور ہوئی، لیکن اس کا مطلب یہ نہیں کہ اس معاملے پر سیاست کی جائے، جو کہ سیاسی مخالفین کر رہے ہیں۔
خبر کا کوڈ : 506796
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے