0
Monday 21 Mar 2016 19:46

ایان علی کو بیرون ملک جانے سے روکنا اور مشرف کو جانے دینا کہاں کا قانون ہے، مشیر اطلاعات سندھ

ایان علی کو بیرون ملک جانے سے روکنا اور مشرف کو جانے دینا کہاں کا قانون ہے، مشیر اطلاعات سندھ
اسلام ٹائمز۔ مشیر اطلاعات سندھ مولا بخش چانڈیو نے کہا ہے کہ ایک طرف ماڈل ایان علی کو بیرون ملک جانے سے روکا جاتا ہے، تو دوسری طرف سنگین مقدمات میں نامزد پرویز مشرف کو بیرون ملک بھیج دیا جاتا ہے، یہ کہاں کا قانون ہے۔ کراچی میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے مشیر اطلاعات سندھ مولا بخش چانڈیو نے کہا کہ ’’ن‘‘ لیگ نے ہی پہلا این آر او کیا تھا، اور اب این آر او ٹو کے تحت پرویز مشرف کو بیرون ملک علاج کے بہانے بھیجا گیا۔ انہوں نے کہا کہ دو روز گزر گئے لیکن پرویز مشرف کے علاوہ کوئی بات نہیں کی جا رہی، اب حکومت اپنی غلطی چھپانے کیلئے غلط بیانی کا سہارا لے رہی ہے۔ مشیر اطلاعات کا کہنا تھا کہ ایک طرف ماڈل ایان علی کو بیرون ملک جانے سے روکا جاتا ہے، تو دوسری طرف سنگین مقدمات میں نامزد پرویز مشرف کو بیرون ملک بھیج دیا جاتا ہے، یہ کہاں کا قانون ہے، کیا ایان علی اور عتیقہ اوڈھو کا جرم پرویز مشرف کے جرم سے بڑا ہے۔ مصطفیٰ کمال کے حوالے سے مشیر اطلاعات نے کہا کہ مصطفیٰ کمال حکومت کے لاڈلے ہیں، لیکن ہو سکتا ہے کہ نتائج تبدیل ہو جائیں، کیونکہ ہر کمال کو زوال ہے۔
خبر کا کوڈ : 528783
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب