0
Monday 11 Apr 2016 18:30

لیبیا میں قذافی کے بعد حالات کی منصوبہ بندی نہ کرنا بدترین غلطی تھی، باراک اوباما

لیبیا میں قذافی کے بعد حالات کی منصوبہ بندی نہ کرنا بدترین غلطی تھی، باراک اوباما
اسلام ٹائمز۔ امریکی صدر براک اوباما نے اعتراف کیا ہے کہ لیبیا میں کرنل قدافی کو معزول کرنے کے بعد کی صورت حال کی پیش بندی اور منصوبہ بندی نہ کرنا ان کے عہدہ صدارت کی سب سے بدترین غلطی تھی۔ وہ امریکی ٹی وی چینل فوکس نیوز پر ایک انٹرویو میں اپنے دورِ اقتدار کے دوران کئے گئے اقدامات کے بارے میں بات کر رہے تھے۔ صدر اوباما نے قدافی کو اقتدار سے علیحدہ کرنے کے بعد کے حالات کے بارے میں مناسب منصوبہ بندی نہ کرنے پر اپنی غلطی کے اعتراف کے باوجود لیبیا میں مداخلت کا دفاع کیا اور کہا کہ یہ صحیح اقدام تھا۔ امریکہ اور اس کے مغربی اتحادیوں نے لیبیا میں 2011ء میں شہریوں کی حفاظت کے لئے لیبیا پر فضائی حملے کئے تھے۔ اس صورت حال میں شدت پسند تنظیم دولت اسلامیہ کے جنگجووں کو لیبیا میں قدم جمانے میں مدد ملی اور لیبیا یورپ آنے والے شامی مہاجرین کے لئے آسان گزرگاہ بن گیا۔ اس ماہ کے اوائل میں اقوام متحدہ کی حمایت یافتہ "متحدہ حکومت" کے اہلکار طرابلس پہنچے تھے، لیکن وہ اقتدار منتقل کئے جانے کے منتظر ہیں۔

یہ پہلا موقع نہیں ہے کہ صدر اوباما نے لیبیا کے بارے میں افسوس کا اظہار کیا ہو۔ گذشتہ ماہ ایک میگزین کو انٹرویو میں انھوں نے کہا تھا کہ لیبیا میں کارروائی میں پیش رفت ان کی توقع کے عین مطابق ہوئی، لیکن اس کے باوجود لیبیا آج بحران کا شکار ہے۔ فوکس نیوز کو اپنے انٹرویو میں انھوں نے اپنے دورِ اقتدار کا سب سے بڑا کارنامہ معیشت کو بڑی کساد بازاری سے بچانا قرار دیا۔ انھوں نے کہا کہ ان کے آٹھ سالہ دور کا سب سے پرمسرت دن وہ تھا، جب ہیلتھ کیئر یا صحت عامہ میں اصلاحات کا قانون منظور ہوا۔ انھوں نے کہا کہ بدترین دن وہ تھا، جب سینڈی ہک ایلیمنٹری سکول میں فائرنگ کا واقعہ پیش آیا۔ صدر اوباما نے گذشتہ برس بی بی سی کو ایک انٹرویو میں کہا تھا کہ امریکہ میں ذاتی اسلحے کے بارے میں سخت قوانین متعارف کرانے میں ناکامی ان کے لئے سب سے زیادہ مایوسی کا باعث ہے۔ گذشتہ ماہ انٹرویو میں انہوں نے فرانس اور برطانیہ پر تنقید کی تھی اور خاص طور پر برطانوی وزیراعظم ڈیوڈ کیمرون کے بارے میں کہا تھا کہ لیبیا میں مداخلت کے بعد ان کی توجہ دوسرے امور کی وجہ سے بٹ گئی۔
خبر کا کوڈ : 532950
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش