0
Monday 6 Mar 2017 09:29

اتحاد اسلامی کے اہم مقاصد میں سرفہرست قبل اول و فلسطین کی آزادی ہے، مسلم یونٹی کونسل

اتحاد اسلامی کے اہم مقاصد میں سرفہرست قبل اول و فلسطین کی آزادی ہے، مسلم یونٹی کونسل
اسلام ٹائمز۔ مسلم دنیا کو اپنی پوری توانائی و طاقت اور تمام اثر و رسوخ فلسطین کی آزادی کے لئے بروئے کار لانا چاہئے، دورِ حاضر کے مسلمانوں کی اہم ذمہ داری قبلہ اول کی بازیابی ہے، یہ تب ہی ممکن ہوگا جب دنیا بھر کے مسلمان متحد ہونگے۔ اتحاد اسلامی کے اہم ترین مقاصد میں سرفہرست قبلہ اول و فلسطین کی آزادی ہے ان خیالات کا اظہار انٹرنیشنل مسلم یونٹی کونسل کے چیئرمین مولانا سید تقی رضا نے نئی دہلی سے میڈیا کے نام جاری اپنے ایک بیان میں کیا۔ انہوں نے کہا کہ انسانیت کی سربلندی، ان کے چین و سکون اور امن عالم کے خواب کی تکمیل کے لئے اسرائیل کا خاتمہ ضروری ہے، اسرائیل جیسی غاصب صہیونی ریاست کے ہوتے ہوئے دنیا میں امن و امان، مساوات و سلامتی قائم نہیں ہوسکتی ہے۔ انٹرنیشنل مسلم یونٹی کونسل کے چیئرمین مولانا سید تقی رضا کا مزید کہنا تھا کہ قبلہ اول کی بازیابی، فلسطین کی آزادی، مظلومین و مستضعفین جہان کی حمایت و غاصب اسرائیل کے خاتمہ کے لئے مسلمانوں کو آپسی اتحاد و بھائی چارگی کا مظاہرہ کرنا ہوگا، اتحاد اسلامی کے بغیر امت مسلمہ کا کوئی بھی مسئلہ حل نہیں ہوسکتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ آج عالم اسلام میں ہر چہار سمت قتل و غارتگری کا بازار گرم ہے، دشمنان اسلام کے ہاتھوں مسلمانوں کی نسل کشی جاری ہے، اسلام اور مقدسات اسلامی کی توہین کی جارہی ہے، درگاہوں اور اولیاء اللہ و صوفیاء کرام کے مزارات کو دہشتگردی کا نشانہ بنایا جارہا ہے، اور مسلمان خاموش تماشائی بنے ہوئے ہیں، مسلمانوں کے پامال ہوتے حقوق کی بازیابی یہ وقت جاگ اٹھنے اور بیداری و شعور کے ساتھ متحد ہونے کا ہے۔ انہوں نے کہا کہ مسلمانان جہان کو اپنے جزوی اختلافات کو ہوا نہ دیکر اپنے مشترکات پر عمل پیرا ہونا چاہئے، امت کی فلاح و بہبود، ترقی و پیشرفت، سرخروی و سربلندی کے لئے ہمیں اقدام کرنے چاہیے۔ مولانا سید تقی رضا نے امریکہ کے نو منتخب صدر ڈونالڈ ٹرمپ کی اسلام دشمنی اور انکی شدت پسندی و ہٹ دھرمی کی پرزور الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ٹرمپ کا اصل نشانہ اسلام اور مسلمانان جہان ہے۔ انہوں نے کہا کہ دنیا بھر کے مسلمان ایسی کسی بھی سازش کا ڈٹ کر مقابلہ کریں گے جس کا مقصد مسلمانوں کو تقسیم کرنا یا انہیں کسی بھی طور پر کمزور کرنا ہو۔ انہوں نے کہا کہ مسلمان اب دشمن و دوست کی تشخیص کرنا جانتے ہیں۔
خبر کا کوڈ : 615347
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے