0
Saturday 15 Jul 2017 22:53
دہشتگردی میں پنجاب کابینہ کا ایک وزیر ملوث ہے، جو دہشتگردوں کا سہولتکار اور سانحہ ماڈل ٹاؤن کا ذمہ دار ہے

کرپٹ اور قاتل حکمرانوں کے اقتدار میں رہنے کا جواز ختم ہوچکا ہے، علامہ احمد اقبال رضوی

سانحہ ماڈل ٹاؤن کی رپورٹ کو پبلک کیا جائے اور ذمہ داروں کو قرار واقعی سزا دی جائے
کرپٹ اور قاتل حکمرانوں کے اقتدار میں رہنے کا جواز ختم ہوچکا ہے، علامہ احمد اقبال رضوی
اسلام ٹائمز۔ مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے مرکزی ڈپٹی سیکرٹری جنرل علامہ سید احمد اقبال رضوی نے لاہور میں پاکستان عوامی تحریک کے احتجاجی جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کرپٹ اور قاتل حکمرانوں کے اقتدار میں رہنے کا جواز ختم ہوچکا ہے، پاناما جے آئی ٹی کی رپورٹ نے ثابت کر دیا ہے حکمرانوں کا پورا کنبہ ہی کرپشن میں ملوث ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاناما جے آئی ٹی کی طرح سانحہ ماڈل ٹاؤن کی جے آئی ٹی جو جسٹس باقر نجفی کی سربراہی میں بنائی گئی تھی، کی رپورٹ بھی پبلک کی جائے۔ انہوں نے کہا کہ جسٹس باقر نجفی نے اپنی رپورٹ میں واضح طور پر حکمرانوں کو سانحہ ماڈل ٹاؤن کا ذمہ دار قرار دیا تھا، جس کی وجہ سے ظالم حکمرانوں نے وہ رپورٹ ہی دبا لی۔ سید احمد اقبال رضوی کا کہنا تھا کہ ملت جعفریہ پاکستان سانحہ ماڈل ٹاؤن کے شہداء اور زخمیوں کے لواحقین کیساتھ کھڑی ہے، پاکستان میں شیعہ اور سنی کا کوئی مسئلہ نہیں، شیعہ اور سنی متحد ہیں۔ انہوں نے کہا کہ شیعہ اور سنی کو منظم سازش کے تحت لڑایا گیا اور فرقہ واریت کو ہوا دینے کیلئے تکفیری گروہ پیدا کیا گیا، مگر آج شہداء کے مقدس لہو کی بدولت شیعہ اور سنی متحد ہیں اور تکفیری گروہ تنہا ہوچکا ہے۔ انہوں نے کہا کہ دہشت گردی میں صوبائی کابینہ کا ایک وزیر ملوث ہے، جو دہشتگردوں کا سہولت کار ہے اور سانحہ ماڈل ٹاؤن کا بھی وہی ذمہ دار ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہم سپریم کورٹ سے مطالبہ کرتے ہیں کہ سانحہ ماڈل ٹاؤن کی رپورٹ کو پبلک کیا جائے اور ذمہ داروں کو قرار واقعی سزا دی جائے۔ احمد اقبال رضوی خطاب کرنے سٹیج پر آئے تو فضا "لبیک یاحسینؑ، لبیک یاحسینؑ" کے فلک شگاف نعروں سے گونج اٹھی۔
خبر کا کوڈ : 653632
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب