0
Tuesday 1 Aug 2017 20:30
امت مسلمہ کسی کو بھی اسلامی تعاون تنظیم کو اسکے اصلی اہداف سے منحرف کرنیکی اجازت نہ دے

عالمی برادری صیہونی حکومت کے جرائم بند کرائے، جواد ظریف

اسرائیل، فلسطینی عوام کیخلاف نسل پرستانہ اقدامات اور پالیسیوں کو بند کرنے پر مبنی تمام عالمی اپیلوں کو مسلسل نظرانداز کر رہا ہے
عالمی برادری صیہونی حکومت کے جرائم بند کرائے، جواد ظریف
اسلام ٹائمز۔ اسلامی جمہوری ایران کے وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے کہا ہے کہ عالمی برادری کو صیہونی جرائم کا سلسلہ ختم کرنے کی کوشش کرنی چاہئے۔ ایرانی وزیر خارجہ نے ترکی کے شہر استنبول میں فلسطین اور قدس کے موضوع پر ہونے والے اسلامی تعاون تنظیم کے وزرائے خارجہ کے اجلاس میں فلسطینیوں کے خلاف صیہونی حکومت کے اقدامات کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ امت مسلمہ کو صیہونیوں کے خلاف عالمی سطح پر تحرک پیدا کرنے کے لئے متحد ہو جانا چاہئے اور اپنے منصوبوں اور سازشوں کو خفیہ رکھنے کی صیہونی حکومت کی کوششوں کو ناکام بنا دینا چاہئے۔ ایرانی وزیر خارجہ نے اس بات کا ذکر کرتے ہوئے کہ مسلمان، صیہونیوں کے سراب اور دھوکے میں نہ آئیں، کہا کہ امت مسلمہ کو چاہئے کہ وہ کسی کو بھی اسلامی تعاون تنظیم کو اس کے اصلی اہداف سے منحرف کرنے کی اجازت نہ دے، جس کا ہدف امت اسلامیہ میں اتحاد کو فروغ دینے اور صیہونی حکومت کی توسیع پسندی اور غاصبانہ قبضے کا مقابلہ کرنے نیز قدس کو دارالحکومت بناتے ہوئے خود مختار فلسطینی حکومت کی تشکیل سے عبارت ہے۔ ایران کے وزیر خارجہ نے صیہونی حکومت کے ہاتھوں غزہ پٹی کے محاصرے کی جانب اشارہ کرتے ہوئے اس علاقے کے محاصرے کو ایک ایسے ڈراؤنے خواب سے تعبیر کیا کہ جس کے سدباب کے لئے فوری اقدام کی ضرورت ہے۔

محمد جواد ظریف نے کہا کہ اسرائیل، فلسطینی عوام کے خلاف نسل پرستانہ اقدامات اور پالیسیوں کو بند کرنے پر مبنی تمام عالمی اپیلوں کو مسلسل نظرانداز کر رہا ہے۔ صیہونی حکومت کے فوجیوں نے چودہ جولائی دو ہزار سترہ سے اسرائیلی وزیراعظم نتین یاہو کے فرمان سے تین دنوں تک مسجدالاقصٰی کے دروازے پوری طرح بند رکھے اور پھر فلسطینیوں اور عالمی رائے عامہ کے دباؤ میں آکر الیکٹرانیک گیٹ نصب کر کے  فلسطیینوں کے لئے مسجد میں داخلے کو مشکل بنا دیا۔ دیگر ذرائع کے مطابق ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف کا کہنا ہے کہ اسرائیل مسلم دنیا کے لئے سب سے بڑا خطرہ ہے، جو خطے میں دہشتگردی اور انتہاء پسندی جیسے خطرات کو ہوا دے رہا ہے۔ استنبول میں میڈیا سے بات کرتے ہوئے ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف کا کہنا تھا کہ صیہونی ریاست مسلم دنیا کا مرکزی خطرہ ہے، اسرائیل مقبوضہ علاقے میں مسلسل یہودی آبادکاری کرنے میں مصروف ہے۔ اسرائیل مقبوضہ فلسطین کی شناخت بدلنا چاہتا ہے، مسلم دنیا کو اسرائیل سے درپیش خطرات سے خبردار رہنا چاہیے، ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف اسلامی تعاون تنظیم کے ہنگامی اجلاس میں شرکت کرنے کے لئے ترکی پہنچے ہیں، جہاں او آئی سی کا ہنگامی اجلاس مسجد اقصٰی کی صورتحال پر منعقد ہو رہا ہے۔
خبر کا کوڈ : 657917
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے