0
Monday 21 Aug 2017 13:20

پشاور، ڈینگی مریضوں کی تعداد ایک ہزار سے بھی تجاوز کر گئی

پشاور، ڈینگی مریضوں کی تعداد ایک ہزار سے بھی تجاوز کر گئی
اسلام ٹائمز۔ پشاور میں ڈینگی سے متاثرہ مریضوں کی تعداد میں دن بہ دن اضافہ ہو رہا ہے اور اب متاثرہ مریضوں کی تعداد ایک ہزار سے بھی تجاوز کر گئی ہے۔ پشاور کے علاقے تہکال کے بعد فقیر آباد، خیبر کالونی، پشتہ خرہ اور ملحقہ علاقوں سے بھی ڈینگی بخار کے مریض سامنے آئے ہیں۔ پشاور کے حیات آباد میڈیکل کمپلیکس ہسپتال کے ترجمان کے مطابق ہسپتال میں 22 ڈینگی مریض زیرِ علاج ہیں، جن کا تعلق تہکال اور پشتہ خرہ سے ہے، جبکہ ڈینگی سے متاثرہ 27 مریضوں کو فارغ کر دیا گیا ہے۔ پشاور میں دیگر عوامی مسائل کی طرح ڈینگی وائرس کا ایشو بھی سیاست کی نذر ہونے لگا۔ پنجاب حکومت کی رضاکارانہ خدمات کو خیبر پختونخوا نے سیاسی چال قرار دیتے ہوئے میڈیکل ٹیم کو سرکاری ہسپتالوں میں رسائی نہیں دی۔ صوبائی حکومت کے انکار کے باوجود پنجاب سے پشاور جانے والی کاروان صحت وین پر شہریوں کا رش بڑھ گیا، جسے دیکھتے ہوئے گذشتہ روز مزید 2 موبائل ٹیمیں پشاور پہنچ چکی ہیں۔ شہری کہتے ہیں کہ سرکاری ہسپتالوں میں علاج معالجے کی سہولت میسر نہیں، پھر بھی صوبائی حکومت نے پنجاب سے آئی ٹیموں کو ہسپتالوں تک رسائی دینے سے انکار کر دیا۔ سرکاری ہسپتالوں سے مایوس افراد کے لئے پنجاب حکومت کا کاروان صحت نعمت بن کر سامنے آیا، جہاں دن رات مریضوں کا مفت چیک اپ کیا جا رہا ہے اور ساتھ ہی مریضوں کو مفت ادویات بھی فراہم کی جا رہی ہیں۔
خبر کا کوڈ : 663012
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب