0
Saturday 2 Sep 2017 22:15

بھارتی فوج کی فائرنگ سے 5 سالہ بچی جاں بحق

بھارتی فوج کی فائرنگ سے 5 سالہ بچی جاں بحق
اسلام ٹائمز۔ آزاد کشمیر میں لائن آف کنٹرول (ایل او سی) کے قریب عباس پور سیکٹر میں بھارتی فوج کی بلااشتعال فائرنگ سے پانچ سالہ بچی جاں بحق ہو گئیں۔ پولیس افسر جاوید اقبال کا کہنا تھا کہ ضلع پونچھ کے عباس پور سیکٹر کے گاؤں پولاس میں ایک یتیم بچی اپنے گھر کے صحن میں کھیل رہی تھی کہ بھارتی فوج کی جانب سے فائر کی گئی گولی ان کے جسم میں پیوست ہو گئی۔ ان کا کہنا تھا کہ عید کی خوشیاں منانے والی معصوم بچی کو زخمی حالت میں موٹرسائیکل میں عباس پور کے ایک ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گئیں۔ پولاس اور قریبی گاؤں کے رہائشی بڑی تعداد میں ہسپتال پہنچے اور عباس پور پل کے پاس 'بھارتی فوج کی جانب سے ایل اوسی پر فائرنگ کے سلسلے میں متاثر ہونے والے رہائشیوں کے حوالے سے ریاست اور حکومت کی بےحسی پر احتجاج کیا'۔

مظاہرین سے خطاب میں دعویٰ کیا گیا کہ سول انتظامیہ اور فوج کی جانب سے ایل اوسی پر ان کی سکیورٹی کا یقین دلایا گیا تھا 'لیکن وہ اپنے وعدے کو نبھانے میں ناکام رہے ہیں'۔ احتجاج میں موجود مقامی صحافی بدیع الزمان نے ڈان نیوز کو بتایا کہ 'مظاہرین کا مطالبہ ہے کہ ڈپٹی کمشنر یا کوئی اور اعلیٰ عہدیدار ان سے مذاکرات کرے لیکن کوئی نہیں پہنچا کیونکہ اکثر افسران اپنے خاندانوں کے ساتھ عید منانے کے لیے چھٹیوں پر ہیں'۔ ان کا کہنا تھا کہ مظاہرین بھارتی فوج کی فائرنگ سے متاثر ہونے والے رہائشوں کے لیے 'متاثرہ علاقوں میں کالونیاں' بنانے کا مطالبہ کررہے ہیں۔

خیال رہے کہ ایک ماہ قبل عباس پور سے کئی خاندانوں نے ایل او سی پر کشیدہ حالات کے باعث ہجرت کی تھی تاہم چند خاندان واپس لوٹے تھے جبکہ اکثر واپس نہیں ہوئے۔ بعدازاں جاں بحق بچی کی نماز جنازہ ادا کی گئی اور اس موقع پر عباس پور کے تحصیل دار ملک حلیم پہنچے تاہم مظاہرین نے انھیں واضح کیا کہ اگر حکومت ایل او سی کے رہائشیوں کے لیے کالونی تعمیر نہیں کرتی تو پھر شدید احتجاج کیا جائے گا۔
خبر کا کوڈ : 666092
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب