0
Tuesday 19 Sep 2017 10:32

ایران کیساتھ معاہدے سے دست بردار ہوا جائے یا پھر اس معاہدے میں سنجیدہ ترامیم کی جائیں، نیتن یاہو کی امریکی صدر کو تجویز

ایران کیساتھ معاہدے سے دست بردار ہوا جائے یا پھر اس معاہدے میں سنجیدہ ترامیم کی جائیں، نیتن یاہو کی امریکی صدر کو تجویز
اسلام ٹائمز۔ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ سے صیہونی وزیراعظم بنیامین نیتن یاہو نے تیسری ملاقات کی ہے، جس میں ایران کے معاملے پر تبادلہ خیال کیا گیا، تاہم اس دوران مسئلہ فلسطین کے حوالے سے کوئی بات چیت نہیں ہوئی۔ غیر ملکی میڈیا کے مطابق اسرائیلی وزیراعظم کی امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ سے تیسری ملاقات مکمل طور پر ایران کے معاملے کے لئے مخصوص رہی۔ اس دوران مسئلہ فلسطین کے حوالے سے کوئی بات چیت نہیں ہوئی، جس کے بارے میں ٹرمپ نے ملاقات کے آغاز میں ذکر کیا تھا۔ ملاقات کے بعد نیتن یاہو نے صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے واضح کیا کہ امریکی صدر کا نقطہ نظر اسرائیل کے ساتھ مطابقت رکھتا ہے، جبکہ صدر اوباما کی انتظامیہ کے زمانے میں صورت حال اس کے برعکس تھی۔ بات چیت میں ٹرمپ نے ایران کو خطے کے مسائل کی جڑ قرار دیا اور واضح کیا کہ انہوں نے ایران کی جانب سے ان شر انگیزیوں کو روکنے کے لئے تجاویز پیش کیں۔ نیتن یاہو کا کہنا تھا کہ اس امر کے عملی اقدامات کی صورت اختیار کرنے کے لئے وقت درکار ہوگا۔

انہوں نے کہا کہ ایرانی نیوکلیئر معاہدے کے حوالے سے امریکی موقف فیصلہ کن ہے اور یہ دیگر بڑے ممالک کے موقف کو بھی تبدیل کرسکتا ہے۔ نیتن یاہو نے ٹرمپ کو تجویز دی کہ یا تو ایران کے ساتھ معاہدے سے دست بردار ہوا جائے یا پھر اس معاہدے میں سنجیدہ ترامیم کی جائیں۔ ان میں تہران پر پابندیوں میں اضافہ، بلند شرح کے ساتھ یورینیئم کی افزودگی پر پابندی کی مدت کم از کم 15 برس کرنا، تہران کے پاس موجود تمام جدید ترین سینٹری فیوجز تباہ کرنا، تہران سے دور مار کرنے والے بیلسٹک میزائل پروگرام کو روک دینے کا مطالبہ اور حزب اللہ کے لئے ایران کی مالی اور عسکری سپورٹ روکنے کا عہد شامل ہے۔ توقع ہے کہ کہ اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے سامنے اپنے خطاب میں اسرائیلی وزیراعظم ایران کے ساتھ نیوکلیئر معاہدے کو بھی شدید تنقید کا نشانہ بنا سکتے ہیں، جس کو وہ انتہائی خطرناک شمار کرتے ہیں۔ اسی طرح وہ ایرانی سپریم لیڈر سید علی خامنہ ای کو براہ راست مخاطب کرسکتے ہیں۔
خبر کا کوڈ : 670418
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب