0
Wednesday 3 Jan 2018 14:12

فلسطین جب مذاکرات کیلئے تیار نہیں تو ہم امداد کیوں دیں؟ ڈونلڈ ٹرمپ

فلسطین جب مذاکرات کیلئے تیار نہیں تو ہم امداد کیوں دیں؟ ڈونلڈ ٹرمپ
اسلام ٹائمز۔ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے پاکستان کے بعد فلسطین کی امداد روکنے کا بھی اعلان کر دیا۔ اپنے پیغام میں انہوں نے کہا کہ فلسطین جب مذاکرات کے لئے تیار نہیں تو ہم امداد کیوں دیں۔ تفصیلات کے مطابق امریکی صدر ٹرمپ نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں کہا کہ صرف پاکستان نہیں بہت سے دوسرے ممالک کو بھی لاکھوں ڈالر دیتے ہیں، پاکستان ہی نہیں، کئی دوسرے ممالک نے بھی لاکھوں ڈالر لیکر کچھ نہیں کیا، اتنی امداد دینے کے باوجود ہمیں ان ممالک سے احترام اور پذیرائی نہیں ملتی۔ ٹرمپ نے مزید کہا کہ ہم نے مذاکرات کے سب سے مشکل ترین مرحلے میں ٹیبل سے ہٹ کر ہی کامیابی حاصل کی اور یروشلم کو چھین لیا ہے، لیکن اسرائیل کو اس کیلئے مزید قربانیاں دینا ہوں گی، فلسطین کو لاکھوں ڈالر امداد دینے کے باوجود بدلے میں کچھ حاصل نہیں ہوا، فلسطین جب مذاکرات کے لئے تیار نہیں تو ہم امداد کیوں دیں؟ یاد رہے گذشتہ روز امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا تھا کہ امریکہ نے گذشتہ 15 سال میں 33 ارب ڈالرز پاکستان کو دے کر بے وقوفی کی، پاکستان امریکہ کو ہمیشہ دھوکہ دیتا آیا ہے، پاکستان نے امداد کے بدلے امریکہ کو بے وقوف بنانے کے بجائے کچھ نہیں کیا۔ ٹرمپ کا کہنا تھا کہ پاکستان ان دہشت گردوں کو محفوظ پناہ گاہیں فراہم کرتا ہے، جنہیں ہم افغانستان میں تلاش کر رہے ہیں، امداد وصول کرنے کے باوجود پاکستان نے امریکہ سے جھوٹ بولا۔ ٹرمپ کی دھمکی کے بعد امریکہ نے پاکستان کی 255 ملین ڈالرز کی فوجی امداد بھی روک لی تھی۔
خبر کا کوڈ : 694601
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب