0
Thursday 2 Aug 2018 20:53

کراچی کا برانڈ صرف اور صرف پتنگ ہے، میئر کراچی وسیم اختر

کراچی کا برانڈ صرف اور صرف پتنگ ہے، میئر کراچی وسیم اختر
اسلام ٹائمز۔ میئر کراچی وسیم اختر نے کہا ہے کہ انتخابات میں جو کچھ ہوا اس کی ساری ذمہ داری الیکشن کمیشن پر ہے، کراچی کا برانڈ صرف اور صرف پتنگ ہے، پاکستان میں اس قسم کے انتخابات کبھی دیکھنے کو نہیں ملے، ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ قومی اسمبلی کے 8 اور صوبائی کے 16 حلقوں کو کھولا جائے، کراچی کے لوگ جانتے ہیں کہ کس طرح شہر کے مینڈیٹ کو لوٹا گیا ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ضلع شرقی میں واقع مختلف برساتی نالوں کا دورہ کرنے کے موقع پر میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے اختر کالونی، رحمن کالونی، منظور کالونی، محمود آباد، کراچی ایڈمنسٹریشن سوسائٹی، پی ای سی ایچ ایس بلاک 6، ریلوے کالونی اور دیگر علاقوں کا دورہ کیا، ان کے ہمراہ ضلعی میونسپل کارپوریشن شرقی کے چیئرمین معید انور، سینئر ڈائریکٹر میونسپل سروسز نعمان ارشد، ڈائریکٹر میونسپل سروسز مشیر احمد، متعلقہ انجینئرز اور دیگر افسران بھی موجود تھے۔ میئر کراچی وسیم اختر نے کہا کہ ہم نے گزشتہ دنوں جو سونامی جھیلا تھا وہ کم نہیں تھا، کراچی سے 6 سیٹوں کا ملنا کئی سیٹوں کے برابر ہے۔ انہوں نے کہا کہ آج حکومت سازی میں ایم کیو ایم کا مرکزی کردار ہے، کراچی کے شہریوں نے کسٹم پیڈ اور ٹیسٹ ٹیوب قیادت کو مسترد کردیا ہے۔

انہوں نے ایک بار پھر کہا کہ کراچی ہائٹس اور سندھ کے شہری علاقوں کا برانڈ پتنگ تھا اور پتنگ ہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ابتداء ہی سے منتخب بلدیاتی نمائندوں سے شہریوں کی بڑی توقعات وابستہ ہیں، شہر کے مسائل کو حل کرنے کے لئے بلدیہ عظمیٰ کراچی کے پاس وسائل نہیں ہیں، مگر اس کے باوجود بھی منتخب بلدیاتی نمائندے جس عزم کے ساتھ شہری مسائل حل کرنے کے لئے سرگرم ہیں وہ قابل تحسین ہے، تین کروڑ آبادی کا یہ شہر اب سنجیدگی سے اپنے مسائل کا حل چاہتا ہے، اس مرتبہ جس انداز میں برساتی نالوں کی صفائی کی گئی ہے، اس کی مثال گزشتہ 30 سالوں میں نہیں ملتی، نالوں سے نکالے جانے والے کچرے اور ملبے کو بھی وہاں سے فوری طور پر ہٹایا جا رہا ہے جبکہ غفلت برتنے والے ٹھیکیداروں کے خلاف فوری ایکشن بھی لیا جا رہا ہے۔
خبر کا کوڈ : 742055
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے