0
Tuesday 25 Sep 2018 18:07

کان کنوں کا تحفظ، خیبر پختونخوا حکومت کا قانون سازی کا فیصلہ

کان کنوں کا تحفظ، خیبر پختونخوا حکومت کا قانون سازی کا فیصلہ
اسلام ٹائمز۔ خیبر پختونخوا حکومت نے کان کنی کے حوالے سے قانون سازی کا فیصلہ کرلیا، کانوں میں کام کرنے والے مزدوروں کی انشورنس کروانا لازمی ہوگا۔ صوبائی حکومت نے کان کنوں کیلئے موثر قانون سازی کا فیصلہ کرتے ہوئے وزیرِاعظم عمران خان کی ہدایت پر سیف مائننگ پالیسی میں انشورنس لازمی قرار دیدی ہے۔ خیبر پختونخوا حکومت کے ترجمان کا کہنا تھا کہ شانگلہ سے تعلق رکھنے والے 35 ہزار سے زائد مزدور ملک کے مختلف حصوں میں موجود کانوں میں مزدوری کرتے ہیں، لیکن ان کے تحفظ سمیت انشورنس کا کوئی سلسلہ موجود نہیں ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ کان کنوں کے تحفظ کیلئے موثر قانون سازی اور حفاظتی اقدامات سے نا صرف ان کی جانیں بچائی جا سکیں گی بلکہ ان کی اجرت میں بھی اضافہ ہوگا۔ صوبائی ترجمان شوکت یوسفزئی کا کہنا تھا کہ وزیرِاعظم پاکستان عمران خان نے یقین دلایا ہے کہ کان کنی کے مزدوروں کے تحفظ کیلئے ہر ممکن اقدامات اٹھائے جائیں گے اور ضرورت پڑنے پر نا صرف صوبے بلکہ مرکز میں بھی قانون سازی کی جائے گی۔
خبر کا کوڈ : 752139
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے