0
Sunday 10 Feb 2019 23:39

عمران خان چاہتے ہیں کہ ملک میں بادشاہت نافذ کرکے انہیں بادشاہ قرار دیا جائے، مولا بخش چانڈیو

عمران خان چاہتے ہیں کہ ملک میں بادشاہت نافذ کرکے انہیں بادشاہ قرار دیا جائے، مولا بخش چانڈیو
اسلام ٹائمز۔ پاکستان پیپلز پارٹی کے مرکزی ترجمان سینیٹر مولا بخش چانڈیو نے کہا ہے کہ وزیراعظم عمران خان کی باتیں ان کی ناکامی کا اعتراف ہے، وزیراعظم کیا کہنا چاہ رہے کہ پارلیمنٹ ناکام ہوگئی ہے؟ عمران خان کی بات کا مطلب یہ ہے کہ پارلیمنٹ نہیں آمریت اور بادشاہت ہونی چاہیئے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے ایک بیان میں کیا۔ مولا بخش چانڈیو نے کہا کہ عمران خان چاہتے ہیں کہ ملک میں بادشاہت نافذ کرکے انہیں بادشاہ قرار دیا جائے، وزیراعظم چاہتے ہیں کہ ان کے نااہل وزرا کو نورتن قرار دیا جائے، افسوس کہ خود کو منتخب وزیراعظم کہنے والا پارلیمنٹ کے مستقبل سے مایوس ہوگیا ہے، حقیقی منتخب وزیراعظم کبھی بھی پارلیمنٹ سے مایوس نہیں ہو سکتا۔ عمران خان نے ثابت کر دیا کہ وہ ایک سلیکٹڈ وزیراعظم ہیں۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان حکومت کے آغاز پر ہی مایوسی کا شکار ہے تو آگے کیا ہوگا، عمران خان کے حالیہ بیانات کے بعد لوگ انہیں سلیکٹڈ کہنے میں حق بجانب ہیں، عمران خان کے حالیہ بیانات مایوسی اور بے بسی کی بدترین مثال ہیں، میں نے کبھی ایسا بے بس وزیراعظم نہیں دیکھا۔
خبر کا کوڈ : 777254
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب