0
Saturday 23 Mar 2019 12:20
تھارتی تنگ نظری خطے کے امن کیلئے خطرناک ہے

بھارت کو یہ تسلیم کرنا ہوگا کہ پاکستان ایک حقیقت اور آزاد قوم ہے، صدر عارف علوی

بھارت کو یہ تسلیم کرنا ہوگا کہ پاکستان ایک حقیقت اور آزاد قوم ہے، صدر عارف علوی
اسلام ٹائمز۔ صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی کا کہنا ہے کہ پاکستان ایک حقیقت ہے اور بھارت کو یہ تسلیم کرنا ہوگا۔ یوم پاکستان کی مناسبت سے مسلح افواج کی پریڈ کی تقریب سے خطاب کے دوران صدر مملکت عارف علوی نے کہا کہ 23 مارچ پاکستان کے حصول کا سنگ میل ہے، قائداعظم محمد علی جناحؒ کی ولولہ انگیز قیادت نے پاکستان کے حصول کو یقینی بنایا، اللہ تعالیٰ کا شکر ادا کرتے ہیں کہ اس نے آزادی جیسی نعمت عطا کی، آج آزادی کا حصول قربانی کا متقاضی ہے، پوری قوم تجدید عہد کے ساتھ یوم پاکستان منا رہی ہے، آج پاکستان ابھرتی ہوئی معاشی قوت ہے۔ صدر مملکت نے کہا کہ جب پاکستان ہماری پہچان بنا، تو ہمیں لامحدود چیلنجز کا سامنا تھا، ہماری زندگیوں میں بہت سے نشیب و فراز آئے اور ہم پر جنگیں مسلط کی گئیں، ہمیں حالیہ تاریخ میں اپنی قومی تاریخ کے سب سے بڑے چیلنج دہشتگردی کا سامنا کرنا پڑا، ہم دنیا کی واحد قوم ہیں، جس نے اتنی لمبی لڑائی لڑی، جانی و مالی قربانی دی، مگر بے پناہ حوصلے سے دہشتگردی کا مقابلہ کیا اور دہشتگردوں کو کامیاب نہیں ہونے دیا۔

صدر مملکت نے کہا کہ پاکستان ایک حقیقت ہے اور ہم زندہ و تابندہ آزاد قوم ہیں، بھارت کو یہ تسلیم کرنا ہوگا، ہمیں 1947ء کے نظریات اور تصورات کی عینک سے دیکھنا بھارتی قیادت کی تنگ نظری ہوگی، یہ خطے کے امن کیلئے خطرناک ہے، خطے کو امن کی ضرورت ہے، ہمیں جنگ کے بجائے تعلیم، صحت اور روزگار کی فراہمی پر توجہ دینی چاہیے، ہماری اصل جنگ غربت اور بے روزگاری کے خلاف ہے۔ انہوں نے کہا کہ تمام ممالک کی خودمختاری کا احترام کرتے ہیں، ہم لڑائی پر یقین نہیں رکھتے، ہم مسائل کو مذاکرات سے حل کرنے پر یقین رکھتے ہیں، لیکن امن کی خواہش کو ہماری کمزوری نہ سمجھا جائے، بھارت بھی حقائق کو تسلیم کرے، ہم نے بہترین حکمت عملی سے بھارت کو جواب دیا، ہم پُرامن قوم ہیں، لیکن اپنے دفاع سے ہرگز غافل نہیں۔
خبر کا کوڈ : 784745
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب