0
Tuesday 21 May 2019 16:10

پاکستان میں براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری آدھی رہ گئی

پاکستان میں براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری آدھی رہ گئی
اسلام ٹائمز۔ اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے مطابق رواں مالی سال کے ابتدائی 10 ماہ میں غیر ملکی براہ راست سرمایہ میں 51 فیصد سے زائد کمی واقع ہوئی ہے۔ اسٹیٹ بینک کی جانب سے جاری اعداد و شمار کے مطابق رواں مالی سال جولائی تا اپریل کے دوران براہ راست غیر ملکی سرمایہ کاری ایک ارب 37 کروڑ 61 لاکھ ڈالر رہی، جبکہ گزشتہ مالی سال کے اسی دورانیے میں 2 ارب 84 کروڑ 91 لاکھ ڈالر کی سرمایہ کاری کی گئی تھی، اس طرح رواں برس کے ابتدائی 10 ماہ میں براہ راست غیرملکی سرمایہ کاری 51.7 فیصد کم رہی۔ اپریل 2019ء میں براہ راست غیرملکی سرمایہ کاری 10 کروڑ 18 لاکھ ڈالر تک محدود رہی۔ مرکزی بینک کے مطابق رواں مالی سال کے پہلے دس ماہ میں اسٹاک مارکیٹ میں کی جانے والی پورٹ فولیو سرمایہ کاری گزشتہ سال کے مقابلے میں 200 فیصد کم رہی، جولائی تا اپریل کے دوران غیر ملکی سرمایہ کاروں نے اسٹاک مارکیٹ سے 40 کروڑ 81 لاکھ ڈالر نکال لیے۔
خبر کا کوڈ : 795521
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب