0
Wednesday 19 Jun 2019 19:38

وزیراعلیٰ سندھ کا پولیو کے قطرے پلانے سے انکار کرنے والے والدین کے خلاف مقدمہ درج کرنے کا حکم

وزیراعلیٰ سندھ کا پولیو کے قطرے پلانے سے انکار کرنے والے والدین کے خلاف مقدمہ درج کرنے کا حکم
اسلام ٹائمز۔ سندھ سے پولیو وائرس کا خاتمہ نہ ہوسکا، وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے پولیو سے بچاؤ کے قطرے پلانے سے انکار کرنے والے والدین کیخلاف مقدمہ درج کرنے حکم جاری کردیا ہے۔ ترجمان وزیراعلیٰ سندھ کے مطابق وزیراعلیٰ مراد علی شاہ کی زیرصدارت پولیو کے خاتمے کی صوبائی ٹاسک فورس کا اجلاس ہوا، جس میں وزیر صحت ڈاکٹر عذرہ پیچوہو، وزیر بلدیات سعید غنی، صوبائی سیکرٹریز اور تمام ڈویژنل کمشنرز نے شرکت کی۔ وزیراعلیٰ کو بریفنگ میں بتایا گیا کہ کراچی میں گڈاپ، گلشن ٹاؤن، بلدیہ، لانڈھی، بن قاسم، سائٹ، لیاقت آباد اور صدر ٹاؤن کے علاقوں میں پولیو وائرس موجود ہے۔ سکھر، جیکب آباد، حیدرآباد، دادو اور قمبر کے مختلف علاقوں میں پولیو وائرس کی موجودگی کی تصدیق ہوئی ہے، اپریل میں کراچی میں 2 لاکھ 51 ہزار 806 بچوں کو پولیو ویکسین دینے سے والدین نے انکار کیا۔ وزیراعلیٰ سندھ نے بچوں کے والدین کی طرف سے پولیو ویکسین سے انکار پر شدید برہمی کا اظہار کیا اور ان علاقوں میں پولیو کے وائرس کو ختم کرنے کے اقدامات کرنے کی ہدایت دیتے ہوئے حکم جاری کیا کہ جو والدین بچوں کو پولیو ویکسین سے انکار کرتے ہیں، ان کیخلاف فوری مقدمہ دائر کرکے کارروائی کی جائے۔

مراد علی شاہ نے کہاکہ ہماری بہترین پولیو ویکسی نیشن کے باوجود رواں سال دو کیسز ظاہر ہونا شدید افسوس کی بات ہے، ہماری اپنی قوم اور عالمی برادری کے ساتھ پولیو کے خاتمے کی کمٹمنٹ تھی لیکن ابھی تک ہدف حاصل نہیں ہو رہا۔انہوں نے کہا کہ فروری میں لیاری، اپریل میں لاڑکانہ میں  پولیو کے کیسز ظاہر ہوئے، یہ شدید تکلیف کی بات ہے۔ پولیو ورکرز کی تربیت کو مزید بہتر کرنے کی ہدایت دیتے ہوئے وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ کمشنرز خود حصہ لیں اور اس کی تفصیلات دیں۔ مراد علی شاہ نے جن اضلاع میں پولیو کیسز ہورہے ہیں وہاں کے ڈپٹی کمشنرز اور دیگر متعلقہ افسران کو بھی شوکاز دینے کا حکم جاری کیا۔
خبر کا کوڈ : 800403
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب