0
Wednesday 26 Jun 2019 18:55

معیشت تباہ کرنیوالے کس لئے سرجوڑ کر بیٹھے ہیں، خرم نواز گنڈاپور

معیشت تباہ کرنیوالے کس لئے سرجوڑ کر بیٹھے ہیں، خرم نواز گنڈاپور
اسلام ٹائمز۔ پاکستان عوامی تحریک کے سیکرٹری جنرل خرم نواز گنڈاپور نے کہا ہے کہ 30 سال تک معیشت کو تباہ کرنیوالے اب کس لیے سر جوڑ کر بیٹھے ہیں، جسے اے پی سی کہا جا رہا ہے اس میں اپوزیشن کی تمام جماعتوں کی شرکت بھی نہ ہو سکی، شریف برادران ڈیل یا ڈھیل کیلئے ان اجلاسوں کو بطور ہتھکنڈا استعمال کرتے ہیں، عوام سمجھتے ہیں کرپشن کیسز میں لاک اپ میں بند قیادت کو باہر نکالنے کیلئے لاک ڈاءون کی باتیں کی جا رہی ہیں، پیپلز پارٹی بار بار ڈسے جانے کے باوجود ماڈل ٹاءون کے قاتلوں سے ہاتھ ملاتی ہے، شریف برادران کسی کے خیر خواہ نہیں، اپوزیشن کی اے پی سی اپوزیشن جماعتوں کا بھی اعتماد حاصل نہ کر سکی، تھکی ہوئی عمر رسیدہ کرپٹ سیاسی قیادت کا آئندہ کے سیاسی منظر نامے میں کوئی کردار نہیں اور نہ ہی عوام کو چلے ہوئے کارتوسوں کے بیانات سے کوئی غرض ہے۔ وہ لاہور میں سی ڈبلیو سی کے اجلاس سے خطاب کر رہے تھے۔

انہوں نے کہا کہ سانحہ ماڈل ٹاون پر بھی تین اے پی سی ہوئیں، ہر اے پی سی میں شہباز شریف کو سانحہ ماڈل ٹاون کا ذمہ دار ٹھہرایا گیا، ہم عوامی تحریک کی اے پی سی میں شریک سیاسی قائدین کو سانحہ ماڈل ٹاون کے مظلوموں کو انصاف دلوانے کا وعدہ یاد کروا رہے ہیں، جن قاتلوں کی گرفتاری کیلئے عوامی تحریک اور شہدائے ماڈل ٹاون کے ورثاء کیساتھ اظہار یکجہتی کیا گیا تھا آج وہی رہنما انہی قاتلوں کیساتھ سر جوڑ کر بیٹھے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اخلاقی اقدار سے عاری اور دو عملی کی سیاست نے پاکستان میں نہ جمہوری اداروں کو پنپنے دیا اور نہ ہی اس رویے سے ملک و قوم کی کوئی خدمت ہو سکی۔ انہوں نے مزید کہا کہ اپوزیشن کے لیڈر عدالتوں میں بے گناہی ثابت کرنے کے بعد حکومت کیخلاف تحریک چلانے کی باتیں کریں گے تو عوام ان پر دھیان دیں گے، فی الوقت عوام یہی سمجھتے ہیں احتساب کے شکنجے سے بچنے کیلئے احتجاج کی باتیں ہو رہی ہیں۔
خبر کا کوڈ : 801590
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب