0
Sunday 7 Jul 2019 11:18

عصر حاضر کے مسائل اور چیلنجز کے حل کیلئے احادیث نبوی پر غوروفکر کرنا ضروری ہے، منظور عالم

عصر حاضر کے مسائل اور چیلنجز کے حل کیلئے احادیث نبوی پر غوروفکر کرنا ضروری ہے، منظور عالم
اسلام ٹائمز۔ ماہرین اسلامیات اور علمائے دین نے ہندوستان اور پوری دنیا کو آج درپیش مسائل اور چیلنجز کا حل تلاش کرنے کے لئے احادیث نبوی میں غور و فکر کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔ بیسوی صدی کے عظیم محدث مولانا حبیب الرحمن اعظمی کی حیات و خدمات پر انسٹی ٹیوٹ آف آبجیکٹیو اسٹڈیز (آئی او ایس) کے دو روزہ سیمینار کی صدارت کرتے ہوئے ڈاکٹر محمد منظور عالم نے کہا کہ علماء کو اس بات پر کام کرنے کی ضرورت ہے کہ موجودہ حالات سے نمٹنے کے لئے احادیث میں کیا رہنمائی کی گئی ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہندوستان میں پسماندہ طبقات، اقلیتوں، جمہوریت پسند غیر مسلم طبقات سب کو متعدد مسائل درپیش ہیں۔ انہوں نے کہا کہ فرقہ واریت، تشدد، انتہاء پسندی، دہشتگردی اور ان جیسے دوسرے خطرناک مسائل سے ہندوستانی معاشرہ جوجھ رہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ علماء کو اس بات پر کام کرنا چاہیئے کہ تعلیمات نبوی میں ان مسائل کا کیا حل ہے۔ منظور عالم نے کہا کہ اسی طرح عالمی نقطہ نظر سے دیکھیں تو سرمایہ داری، قدرتی خزانوں کا غلط استعمال، غریب ممالک کو کچلنے کی سوچ اور ترقی یافتہ طاقتوں کے ذریعہ پسماندہ یا ترقی پذیر ممالک کو آگے نہ بڑھنے دینے کا رجحان پوری قوت کے ساتھ موجود ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں یہ دیکھنا چاہیئے کہ ان تمام عالمی مسائل کے حل کے لئے احادیث نبوی کیا علاج فراہم کرتی ہے۔ اس دوران آل انڈیا مسلم پرسنل لاء بورڈ کے جنرل سیکرٹری مولانا سید محمد ولی رحمانی نے کہا کہ مولانا حبیب الرحمن اعظمی بنیادی طور پر میدان حدیث کے ماہر تھے اور انہوں نے اسے پوری زندگی سینچنے اور سنوارنے کا کام کیا۔
خبر کا کوڈ : 803631
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب