1
Thursday 8 Aug 2019 11:08

زرداری کا چیئرمین سینیٹ کے خلاف دوبارہ عدم اعتماد کی تحریک لانے کا اعلان

زرداری کا چیئرمین سینیٹ کے خلاف دوبارہ عدم اعتماد کی تحریک لانے کا اعلان
اسلام ٹائمز۔ پاکستان پیپلز پارٹی (پی پی پی) کے شریک چیئرمین اور سابق صدر آصف علی زرداری نے چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی کے خلاف دوبارہ عدم اعتماد کی تحریک لانے کا اعلان کردیا۔ پروڈکشن آرڈر پر جیل سے باہر آنے والے سابق صدر سے جب صحافی نے سوال کیا کہ صادق سنجرانی کے خلاف تحریک عدم اعتماد کا آپشن دوبارہ استعمال کریں گے؟ جس پر آصف زرداری نے مثبت جواب دیتے ہوئے کہا کہ انشاء اللہ انشاء اللہ۔ اس موقع پر آصف علی زرداری نے کہا کہ چیئرمین سینیٹ کے خلاف دوبارہ قرارداد لانے کے لیے تین ماہ کا وقت درکار ہوتا ہے، تاہم ایک مرتبہ جنگ نہیں جیت سکے لیکن دوبارہ جیت جائیں گے۔ انہوں نے سینیٹ میں خفیہ رائے شماری کو ختم کرنے کے لیے رولز میں ترمیم کا عندیہ بھی دے دیا۔

اسلام آباد میں صحافی کے سوال کے جواب میں شریک چیئرمین پیپلزپارٹی نے کہا کہ مسلم لیگ (ن) کےسینئر رہنما خواجہ آصف کی اپنی پارٹی میں کوئی حیثیت نہیں ہے، لہٰذا وہ خواجہ آصف کے بیانات پر ردعمل نہیں دینا چاہتے۔ واضح رہے کہ یکم اگست کو اپوزیشن کی جانب سے چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی کے خلاف تحریک عدم اعتماد ناکام ہوگئی تھی۔ ملکی تاریخ میں پہلی مرتبہ چیئرمین سینیٹ کو عہدے سے ہٹانے کی اپوزیشن کی تحریک عدم اعتماد پر ایوان بالا میں خفیہ رائے شماری ہوئی تھی۔ اپوزیشن لیڈر راجا ظفر الحق کی جانب سے چیئرمین سینیٹ کے خلاف پیش کی گئی قرارداد پر 64 اراکین نے حمایت کی تھی جس کے بعد تحریک عدم اعتماد پر خفیہ رائے شماری کا آغاز کیا گیا تھا۔ صادق سنجرانی کے خلاف اپوزیشن کی فتح 53 ووٹ سے ممکن تھی لیکن جب خفیہ رائے شماری کے نتائج کا اعلان ہوا تو اپوزیشن کو 3 ووٹ کی ناکامی کا سامنا کرنا پڑا تھا اور قرارداد کے حق میں 50 ووٹ آئے تھے۔
خبر کا کوڈ : 809500
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب