0
Thursday 8 Aug 2019 11:34

ٹرمپ انتظامیہ پیدا شدہ بحران کو حل کرنے میں پاکستان اور بھارت کی مدد کرے گی، سینیٹر لنڈسے گراہم

ٹرمپ انتظامیہ پیدا شدہ بحران کو حل کرنے میں پاکستان اور بھارت کی مدد کرے گی،  سینیٹر لنڈسے گراہم
اسلام ٹائمز۔ امریکہ کے بااثر سینیٹر لنڈسے گراہم نے کہا ہے کہ پاکستان اور بھارت کو فوجی تصادم سے بچانے کے لیے خطے سمیت پوری دنیا کو کردار ادا کرنا ہوگا کیونکہ یہ ان کے اپنے مفاد میں ہے۔ انہوں نے یہ بات سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر جاری کردہ اپنے ایک پیغام میں کہی ہے۔ ٹرمپ انتظامیہ میں انتہائی اہمیت کے حامل قراردیے جانے والے سینیٹ میں قانون ساز کمیٹی کے چیئرمین سینیٹر لنڈسے گراہم  نے اس امید کا اظہار کیا کہ موجودہ ٹرمپ انتظامیہ پیدا شدہ بحران کو حل کرنے میں پاکستان اور بھارت کی مدد کرے گی۔ سینیٹر لنڈسے گراہم نے اپنے پیغام میں کہا کہ پاکستان کے وزیرخارجہ سے بات ہوئی ہے، جس میں کشمیر پر پیدا ہونے والی صورتحال زیر غور آئی۔

انہوں نے زور دے کر اپنے ٹوئٹ پیغام میں کہا کہ بھارت نے کشمیر میں جو تبدیلی کی ہے اس پر غورو فکر کرنے کی فوری ضرورت ہے وگرنہ پیدا شدہ تناؤ میں مزید اضافہ ہو جائے گا۔ امریکی سینیٹر نے کہا کہ کشمیر پر پاکستان اور بھارت کو فوجی تصادم سے بچانا ہو گا اور اس کے لیے خطے سمیت پوری دنیا کو اپنا کردار ادا کرنا ہوگا۔ عالمی خبررساں ایجنسی کے مطابق وائٹ ہاؤس کے ایک ذمہ دار ذرائع کا کہنا ہے کہ پاکستان اور بھارت کو براہ راست بات چیت میں تعاون فراہم کریں گے۔ ذمہ دار افسر کا مؤقف تھا کہ فوجی تناؤ کے خطرات سے گریز کے لیے ضروری ہے کہ کشیدگی کم کی جائے۔ خبررساں ادارے کے مطابق وائٹ ہاؤس کے ذمہ دار افسر کا کہنا تھا کہ فوری ڈائیلاگ کی اشد ضرورت ہے۔ انہوں نے ماضی کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ خطے میں تنازع کی تاریخ بتاتی ہے کہ تحمل و برداشت کی اشد ضرورت ہے، ماضی میں پاکستان اور بھارت کے درمیان مسئلہ کشمیر کے حوالے سے باقاعدہ جنگیں ہو چکی ہیں۔
خبر کا کوڈ : 809502
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب