0
Saturday 31 Aug 2019 21:48

مسئلہ کشمیر پر دنیا بھر کے سکھ پاکستان کیساتھ ہیں، عثمان بزدار

مسئلہ کشمیر پر دنیا بھر کے سکھ پاکستان کیساتھ ہیں، عثمان بزدار
اسلام ٹائمز۔ گورنر ہاوس لاہور میں انٹرنیشنل سکھ کنونشن کا انعقاد کیا گیا جس میں امریکہ، کینیڈا، برطانیہ سمیت دنیا کے دیگر ممالک سے سکھ رہنماوں کی شرکت کی۔ دو روزہ کنونشن کے پہلے روز تقریب کے مہمان خصوصی گورنر پنجاب چودھری سرور اور وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار تھے۔ کنونشن میں کرتارپور راہداری سمیت سکھ کمیونٹی کے دیگر امور پر اظہار خیال کیا گیا۔ کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعلیٰ پنجاب کا کہنا تھا کہ میں سکھ کنونشن میں شرکت پر پنجاب کے عوام کی طرف سے آپ سب کا خیرمقدم کرتا ہوں، امریکہ، برطانیہ اور کینیڈا سے آنیوالے سکھ بھائیوں کو پاکستان آمد پر وزیراعظم عمران خان اور پنجاب حکومت کی جانب سے دل کی اتھاہ گہرائیوں سے خوش آمدید کہتا ہوں، مجھے کرتارپور راہداری جیسے تاریخی منصوبے کے افتتاح اور بابا گورو نانک کے 550 ویں جنم دن کی تقریبات کی تیاریوں کے حوالے سے آپ کے ساتھ مشاورت اور بات چیت کرنے کا موقع ملا ہے۔

عثمان بزدار نے کہا کہ پنجاب حکومت نے ننکانہ صاحب میں بابا گورو نانک یونیورسٹی کا سنگ بنیاد رکھ دیا ہے، یونیورسٹی 10 ایکڑ اراضی پر بنائی جا رہی ہے جس پر تقریباً 6 ارب روپے لاگت آئے گی، ننکانہ صاحب کی سڑکوں کی تعمیر و مرمت کیلئے 15 کروڑ روپے کی خطیر رقم فراہم کی گئی ہے، ان سڑکوں کی تعمیر و مرمت سے سکھ یاتریوں کو آمد و رفت کی بہترین سہولتیں میسر ہوں گی۔ وزیراعلیٰ پنجاب کا کہنا تھا کہ سکھ بھائی جتنا آج پاکستان کے قریب آ چکے ہیں، ماضی میں اس کی کوئی مثال نہیں ملتی، مجھے اس بات کی بھی خوشی ہے کہ مسئلہ کشمیر پر دنیا بھر کے سکھ پاکستان کے موقف کی حمایت کر رہے ہیں، امریکہ اور برطانیہ سمیت کئی ممالک میں کشمیریوں کے حق میں ہونیوالے مظاہروں میں بھی سکھ بھائی شریک ہوئے ہیں۔ عثمان بزدار نے کہا کہ پاکستان ایک امن پسند ملک ہے، ہم امن پر یقین رکھتے ہیں اور بھارت سمیت پوری دنیا کو امن اور دوستی کا پیغام دیتے ہیں، پاکستان کی طرف سے امن اور دوستی کے پیغام کو پوری دنیا میں سراہا جا رہا ہے۔

عثمان بزدار نے کہا کہ  سکھ کنونشن کے شرکاء کی طرف سے مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں اور بھارتی فوج کے مظالم کی مذمت کرتے ہیں، ماضی گواہ ہے کہ پاکستان مقامی سکھ برادری اور بھارت سے آنیوالے یاتریوں کی مذہبی روایات کے احترام اور مقدس مقامات تک ان کی رسائی کیلئے سہولتیں فراہم کرتا رہا ہے اور آئندہ بھی کرے گا، پاکستان میں سکھوں سمیت تمام اقلیتوں کو مکمل مذہبی آزادی ہے، اقلیتوں اور ان کے مقدس مقامات کی حفاظت اور دیکھ بھال کا فریضہ پوری تندہی سے سرانجام دیا جاتا ہے۔ عثمان بزدار کا کہنا تھا کہ پاکستان میں سکھوں سمیت تمام اقلیتوں کو جتنی آزادی اور تحفظ حاصل ہے، اس کی پوری دنیا میں کوئی اور مثال نہیں ملتی، ہر پاکستانی اپنے سے بڑھ کر اقلیتوں کے تحفظ کا خیال رکھتا ہے، بابا گورو نانک کے 550 ویں جنم دن کی تقریبات میں شرکت کیلئے آنے والے سکھ یاتریوں کو سکیورٹی سمیت دیگر سہولتوں کی فراہمی کو سو فیصد یقینی بنایا جائے گا۔ وفاقی وزراء شیخ رشید احمد، شفقت محمود، نورالحق قادری، فواد چودھری، صوبائی وزراء محمود الرشید، تیمور بھٹی، پیر سید سعید الحسن شاہ، اعجاز عالم کے علاوہ بین الاقوامی کنونشن کے شرکاء نے بھی تقریب میں شرکت کی۔
خبر کا کوڈ : 813830
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب