0
Tuesday 10 Sep 2019 00:03

وزیرِاعظم پاکستان، آرمی چیف اور چیف جسٹس شیعہ لاپتہ افراد کی بازیابی کیلئے فوری اقدامات کریں، آئی ایس او کراچی

وزیرِاعظم پاکستان، آرمی چیف اور چیف جسٹس شیعہ لاپتہ افراد کی بازیابی کیلئے فوری اقدامات کریں، آئی ایس او کراچی
اسلام ٹائمز۔ امامیہ اسٹوڈنٹس آرگنائزیشن پاکستان کراچی ڈویژن کے زیر اہتمام ہر سال کی طرح امسال بھی 9 محرم الحرام کو بعد نماز ظہرین دورانِ مرکزی جلوس وی آئی پی گیٹ مزارِ قائد کے سامنے ادا کی گئی، جس کی امامت حجت الاسلام و المسلمین مولانا محمد حسین رئیسی نے کی۔ دورانِ نماز شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے آئی ایس او کراچی ڈویژن کے جنرل سیکرٹری ریحان عابدی کا کہنا تھا کہ وطن عزیز میں مکتب تشیع سے تعلق رکھنے والے درجنوں علماء و جوانانِ ملت کو سالوں سے بے جرم و خطا ظالمانہ بیلنس پالیسی کے تحت جبری گمشدہ کیا گیا ہے، سالوں سے انکے پیارے ان کے منتظر ہیں لیکن کوئی بتانے والا نہیں کہ لاپتہ افراد کہاں ہیں، اگر ان کا کوئی جرم ہے تو انہیں عدالت میں پیش کرکے قانونی طریقہ کار اپنایا جائے ناکہ بیلنس پالیسی کے نام پر لاپتہ کیا جائے، ہم ہر فورم پر اپنے گمشدہ افراد کے لئے آواز اٹھائیں گے۔ انہوں نے چیف آف آرمی اسٹاف، چیف جسٹس آف پاکستان، وزیراعظم پاکستان اور ارکان پارلیمنٹ سے مطالبہ کیا کہ وطن کے بیٹوں کی جبری گمشدگی کا نوٹس لیں اور ان کی رہائی کے لئے فوری اقدامات کئے جائیں۔ انہوں نے کہا کہ ملک کے بعض حصوں میں عزاداری سید الشہداء حضرت امام حسین (ع) کو مختلف ہتکھنڈے استعمال کرتے ہوئے محدود کرنے کی کوشش کی جاری ہے، جس کی ہم بھرپور مذمت کرتے ہیں، ہم حکومت وقت سے مطالبہ کرتے ہیں کہ عزاداری کو محدود کرنے کے بجائے تحافظ فراہم کرنے میں اپنے وسائل بروئے کار لائے۔ رریحان عابدی نے کہا کہ امام حسین (ع) نے 60 ہجری میں یزید ملعون کی بیعت سے انکار کرکے دنیا میں آنے والے ہر یزید سے روشناس کروا دیا تھا، آج یہ دنیا پیروانِ یزید سے بھر گئی ہے، آج بحرین، فلسطین، نائیجیریا، یمن، کشمیر سمیت دنیا کے ہر کونے میں مسلمانان عالم کو شہید کیا جا رہا ہے، کشمیر میں اب تک ہزاروں مسلمانوں کو شہید کردیا گیا، مسلمان ممالک اس ظلم کو ہوتا دیکھ کر خاموش تماشائی بنے بیٹھے ہیں۔

ریحان عابدی نے کہا کہ عرب حکمران امریکی اور اسرائیلی مفاد کو سامنے رکھتے ہوئے اس تکفیری دہشت گرد ٹولے کو مضبوط کررہے ہیں، عرب ممالک کشمیر کی آزادی میں اپنا کردار ادا کریں ناکہ کشمیری مسلمانوں کے قاتل نریندر مودی کو اعلٰیٰ سول اعزاز سے نوازیں، قاتل اعظم مودی کو اعزازات سے نوازنا ان کے مسلمان ہونے پر سوالیہ نشان بناتا ہے، عرب ممالک کہتے ہیں کہ کشمیر کے مسئلے کو اسلامی رنگ نہ دیں جب کہ کشمیر میں مسلمانوں کے اوپر مودی نے اپنی قاتل فوج کے ذریعہ ایک جنگ کا سماں بنایا ہوا ہے، اس کے برعکس کہ ایسے وقت میں جب ساری سامراجی اور طاغوتی طاقتوں نے ایران اور رہبرِ معظم سید علی خامنہ ای پر پابندیاں لگانے کی کوشش کی ہوئی ہے، اس مشکل دور میں بھی ایران اور رہبرِ معظم سید علی خامنہ ای نے کشمیریوں کی حمایت کا اعلان کیا جس پر ہم انکے شکر گزار ہیں۔ اس موقع پر شرکاء جلوس نے پاکستان اور مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جارحیت اور دخل اندازی کو مسترد کرتے ہوئے اقوام متحدہ اور دیگر عالمی اداروں سے بھارتی جارحیت کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کیا۔ آخر میں شرکاء جلوس نے امریکہ، اسرائیل، بھارت اور اس سے منسلک یزیدی قوتوں کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا اور امریکہ، اسرائیل اور بھارت کے پرچم نذر آتش کئے۔
خبر کا کوڈ : 815416
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے