0
Tuesday 10 Sep 2019 19:03
مذاکرات کی منسوخی پر واشنگٹن پچھتائے گا

امریکا نے بات چیت کا راستہ بند کیا، اب لڑائی کا راستہ ہی باقی بچا ہے، ترجمان طالبان

امریکا نے بات چیت کا راستہ بند کیا، اب لڑائی کا راستہ ہی باقی بچا ہے، ترجمان طالبان
اسلام ٹائمز۔ طالبان کے ترجمان نے خبردار کیا ہے کہ کہ مذاکرات کی منسوخی پر واشنگٹن پچھتائے گا۔ بات چیت ہو یا لڑائی، مقصد غیر ملکی افواج کو افغانستان سے نکالنا ہے۔ تفصیلات کے مطابق افغان امن مذاکرات منسوخ ہونے کے بعد افغانستان میں امریکی افواج اور طالبان کی کارروائیوں میں تیزی آ گئی ہے۔ طالبان نے شمالی صوبے تخار کے ایک اور ضلع پر قبضہ کرنے کا دعویٰ کیا ہے، جبکہ امریکی وزیر خارجہ کہتے ہیں کہ دس دنوں میں ہزاروں طالبان مارے جا چکے ہیں۔ غیر ملکی میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے طالبان کے ترجمان نے خبردار کیا ہے کہ مذاکرات کی منسوخی پر واشنگٹن پچھتائے گا۔ ترجمان کا کہنا تھا کہ بات چیت ہو یا لڑائی، مقصد غیر ملکی افواج کو افغانستان سے نکالنا ہے۔ امریکا نے بات چیت کا راستہ بند کیا، اب لڑائی کا راستہ ہی باقی بچا ہے۔ اُدھر امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو کا کہنا ہے کہ گذشتہ دس دنوں کے اندر ہزاروں طالبان جنگجو امریکی افواج کے ہاتھوں مارے جا چکے ہیں۔
 
خبر کا کوڈ : 815486
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب