0
Monday 23 Sep 2019 20:32

کے پی حکومت کا بی آر ٹی منصوبے کا ٹھیکہ نیب زدہ کمپنی کو دینے کا اعتراف

کے پی حکومت کا بی آر ٹی منصوبے کا ٹھیکہ نیب زدہ کمپنی کو دینے کا اعتراف
اسلام ٹائمز۔ خیبر پختونخوا حکومت نے پشاور بی آر ٹی منصوبے کا ٹھیکہ نیب زدہ کمپنی کو دینے کا اعتراف کر لیا ہے۔ ذرائع کے مطابق اس ضمن میں اسمبلی میں جمع کرائے گئے دستاویزات میں بتایا گیا ہے کہ صوبائی حکومت نے منصوبے کا ٹھیکہ کالسن کمپنی کو جوائنٹ وینچر پر جاری کیا، مگر ٹھیکہ دیتے وقت پشاور ڈویلپمنٹ اتھارٹی نیب زدہ کمپنی سے ناواقف تھی۔ دستاویزات میں کہا گیا ہے کہ ٹھیکہ حاصل کرتے وقت کمپنی پاکستان انجنئیرنگ کونسل کے ریکارڈ کے مطابق بلیک لسٹ بھی نہیں تھی۔ یاد رہے بی آر ٹی پشاور کا ٹھیکہ دینے والے سابق ڈایئریکٹر جنرل پی ڈی اے سلیم وٹو کے خلاف ایف آئی اے اینٹی کرپشن نے تحقیقات کا آغاز کر رکھا ہے۔ سلیم وٹو کے دور میں بی آر ٹی سمیت تمام پراجیکٹس اور ٹھیکوں کی تفصیلات طلب کر لی گئی ہیں، جبکہ ایف ائی اے نے تفصیلات فراہم کرنے کیلئے پی ڈی اے حکام کو مراسلہ بھی ارسال کر دیا ہے۔ دوسری جانب بی آر ٹی انجنیئرز کی نااہلی کے سبب صدر بازار سے گزرنے والا پل بس کیلئے تنگ پڑ گیا۔
خبر کا کوڈ : 817914
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب