0
Monday 30 Sep 2019 12:45

مقبوضہ کشمیر میں گرفتاریوں کا لامنتاہی سلسلہ جاری، 150 افراد پر پی ایس اے عائد

مقبوضہ کشمیر میں گرفتاریوں کا لامنتاہی سلسلہ جاری، 150 افراد پر پی ایس اے عائد
اسلام ٹائمز۔ مقبوضہ کشمیر میں دفعہ 370 اور 35 اے کی منسوخی کے بعد بھارتی ایجنسیوں نے 4 ہزار افراد کو حراست میں لیکر مختلف جیلوں اور تھانوں میں قید کیا ہے تاہم اگرچہ بعد میں وقفے وقفے سے بڑی تعداد کو رہا کردیا گیا لیکن ابھی بھی مقامی و بیرونی جیلوں میں کشمیری قیدیوں کی ایک وسیع تعداد موجود ہے۔ معلوم ہوا ہے کہ انتظامیہ نے جیل خانوں کے اندر کسی بھی ناامنیت و روکنے کے لئے 150 افراد پر نام نہاد پبلک سیفٹی ایکٹ عائد کرکے بھارت کے مختلف جیلوں میں منتقل کیا ہے۔ ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ دفعہ 370 اور 35 اے کے خاتمے کے بعد جموں و کشمیر میں کٹھ پتلی انتظامیہ اور مختلف ایجنسیوں نے کشمیر کے یمین و یسار میں بڑے پیمانے پر گرفتاریوں کا سلسلہ تیز کردیا ہے۔ معلوم ہوا ہے کہ تقریباً دو ماہ کا وقت گزر جانے کے بعد بھی لوگھوں کی بڑی تعداد مختلف جیلوں میں قید ہے جن میں سے کئی افراد پر کالا قانون پبلک سیفٹی ایکٹ عائد کیا جاچکا ہے۔ قابل ذکر ہے کہ بھارتی حکومت نے نیشنل کانفرنس کے سربراہ اور ممبر آف پارلیمنٹ فاروق عبداللہ جنہوں نے اپنی پوری عمر میں کشمیر پر بھارت کے جبری قبضے کی حمایت کی ہے پر بھی پی ایس اے عائد کیا ہے۔
 
خبر کا کوڈ : 819182
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب