0
Thursday 7 Nov 2019 10:38

آزادی مارچ نیب کی کارروائیاں اور احتساب کا عمل روکنے کے لیے تھا، عارف حمید

آزادی مارچ نیب کی کارروائیاں اور احتساب کا عمل روکنے کے لیے تھا، عارف حمید
اسلام ٹائمز۔ معروف تجزیہ کار اور صحافی عارف حمید بھٹی نے کہا ہے کہ جمعیت علمائے اسلام کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کا آزادی مارچ استعفے کے لیے تھا ہی نہیں بلکہ نیب کی کارروائیاں اور احتساب کا عمل روکنے کے لیے تھا۔ ملک کے معروف صحافی عارف حمید نے کہا ہے کہ چوہدری برادران کے ساتھ مولانا فضل الرحمان کی ملاقات سود مند رہی ہے اور امید ہے کہ آزادی مارچ چند دنوں میں ختم ہو جائے گا۔ نجی ٹی وی شو میں بات کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ آزادی مارچ ختم کرنے کے حوالے سے معاملات کافی حد  تک طے ہوگئے ہیں تاہم حتمی فیصلہ وزیراعظم ہی کریں گے کہ مولانا کو کیا دینا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ مستقبل کے حوالے سے بہت ساری یقین دہانیاں کرائی گئی ہیں اور بلوچستان میں باقاعدہ حصہ بھی دیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ نیب مولانا فضل الرحمان اور جے یو آئی (ف) کے رہنماوں کیخلاف کیسز نہیں کھولے گا اور جو چل رہے ہیں ان پر کارروائی روک دی جائے گی۔ معروف صحافی نے کہا کہ نون لیگ کے 80 فیصد مسائل حل ہو چکے ہیں اور جو کیسز کھولنے کی تیاریاں ہو رہی تھیں وہ روک دی گئی ہیں۔

 
خبر کا کوڈ : 826010
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب