0
Thursday 14 Nov 2019 21:02

مولانا کا ناکام دھرنا عوام کے حقوق کیلئے نہیں تھا، مدرسہ کے لوگوں کو گمراہ کرکے بلوایا گیا تھا، حلیم عادل شیخ

مولانا کا ناکام دھرنا عوام کے حقوق کیلئے نہیں تھا، مدرسہ کے لوگوں کو گمراہ کرکے بلوایا گیا تھا، حلیم عادل شیخ
اسلام ٹائمز۔ پاکستان تحریک انصاف سندھ کے سینیئر رہنما و پارلیمانی لیڈر حلیم عادل شیخ نے اپنے جاری کردہ بیان میں کہا ہے کہ مولانا فضل الرحمان ملک میں انتشار پھلانا چاہتا ہے، مدرسہ کے بچوں اور دیندار لوگوں کو گمراہ کرکے دھرنے میں بلایا گیا، الیکشن میں ناکام اور اب دھرنے میں بھی ناکامی کے بعد مولانا صاحب کو سیاست سے کنارہ کرلینا چاہیئے، مولانا ایک بزرگ عالم دین ہیں ملک میں انتشار پھیلانے کی کوشش نہ کریں، بقیہ زندگی مدرسہ کے بچوں کو دینے تعلیم دینے پر گذاریں۔ انہوں نے مزید کہا کہ ناکام سندھ حکومت کی وجہ سے سندھ کی عوام سراپا احتجاج ہیں، لاڑکانہ اور رتوڈیرو میں ایڈز کی وباء پر تاحال قابو نہیں پایا گیا، اس وقت تک 1167 افراد ایڈز کا شکار ہوچکے ہیں، جس میں زیادہ تعداد بچوں کی ہے۔

حلیم عادل شیخ نے کہا کہ سندھ میں پیپلز پارٹی کی حکومت نے جان بوجھ کر گزشتہ برس گندم کی خریداری نہیں کی تھی جس کی وجہ سے آج آٹا مہنگا مل رہا ہے، سندھ حکومت کی ناکامی کا بھی قصور وار وفاق کو ٹھہرایا جارہا ہے، سندھ حکومت کی ناکامی کا بھی قصور وار وفاق کو ٹھہرایا جارہا ہے، وفاق اگر سندھ میں کچھ بہتر کرنا چاہتی ہے تو پیپلز پارٹی کو 18ویں ترمیم پر حملہ اور جمہوریت خطرے میں نظر آنے لگ جاتی ہے، جلد سندھ کی کرپٹ حکومت سے جان چھوٹنے والی ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان تحریک انصاف کی طلبہ تنظیم آئی ایس ایف کے 12ویں یوم تاسیس کے موقع پر تمام عہدیداروں اور کارکنوں کو مبارکباد پیش کرتے ہیں، ملک کی زیادہ تر آبادی نوجوانوں پر مشتمل ہے، ہمارے نوجوان ہی ملک کی ترقی کے ضامن ہیں۔
خبر کا کوڈ : 827435
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے