0
Saturday 16 Nov 2019 10:32

مولانا کو انڈراسٹینڈنگ کیساتھ وزارت عظمٰی کے استعفے جیسی ایک چیز دیکر بھیجا گیا ہے، چوہدری پرویز الہٰی

مولانا کو انڈراسٹینڈنگ کیساتھ وزارت عظمٰی کے استعفے جیسی ایک چیز دیکر بھیجا گیا ہے، چوہدری پرویز الہٰی
اسلام ٹائمز۔ مسلم لیگ (ق) کے مرکزی رہنما چوہدری پرویز الٰہی نے انکشاف کیا ہے کہ مولانا فضل الرحمٰن نے معاملات طے ہونے کے بعد اسلام آباد کا دھرنا ختم کیا۔ نجی ٹی وی کے میزبان نے پرویز الٰہی سے سوال کیا کہ مولانا نے کہا تھا کہ یا تو وزیراعظم استعفیٰ دیں یا پھر استعفیٰ کے وزن کے برابر اگر کوئی چیز آجائے تو وہ بھی قبول ہے، یہ استعفے جیسی چیز کیا ہے؟۔ اس کے جواب میں پرویز الٰہی نے مسکرا کر جواب دیا کہ مولانا نے انڈر اسٹینڈنگ کے تحت اسلام آباد مارچ ختم کیا، معاملات طے ہونے کے بعد مولانا اسلام آباد سے روانہ ہوئے۔ اسپیکر پنجاب اسمبلی نے مزید کہا کہ مولانا فضل الرحمٰن کو ہم نے جو دے کر بھیجا وہ امانت ہے۔ واضح رہے کہ مولانا فضل الرحمٰن نے اسلام آباد میں آزادی مارچ ختم کر کے پلان بی کے تحت پورے ملک میں اہم شاہراہیں بند کی ہوئی ہیں اور وہ وزیراعظم کے استعفے کے مطالبے پر بضد ہیں۔
خبر کا کوڈ : 827640
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش