0
Thursday 28 Nov 2019 21:39
نااہل حکمران ایک سمری ٹھیک سے نہیں بنا سکے، ملک کیا چلائیں گے

موجودہ حکمرانوں سے نجات حاصل کرنا ہی پاکستان کی بقا کی جنگ ہے، مولانا فضل الرحمان

موجودہ حکمرانوں سے نجات حاصل کرنا ہی پاکستان کی بقا کی جنگ ہے، مولانا فضل الرحمان
اسلام ٹائمز۔ جمعیت علمائے اسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمٰن کا کہنا ہے کہ یہ نااہل حکمران آرمی چیف کی مدت ملازمت میں توسیع کی ایک سمری تک ٹھیک سے نہیں بنا سکے تو ملک کیا چلائیں گے۔ سکھر میں آزادی مارچ جلسے سے خطاب کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمٰن نے کہا ہے کہ ہماری خارجہ پالیسی تباہ ہوچکی ہے، سب جانتے ہیں کہ حکومت کشمیر بیچ چکی ہے، حکومت کی باقی نااہلیوں کی بھی لمبی فہرست ہے، ایسے حکمرانوں سے نجات حاصل کرنا ہی پاکستان کی بقا کی جنگ ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکمرانوں کی نااہلی کے باعث آرمی چیف کو کورٹ میں گھسیٹا گیا، جس پر ہمیں شرم آرہی ہے، یہ نااہل حکمران ایک سمری تک ٹھیک نہیں بنا سکے تو ملک کیا چلائیں گے۔ سربراہ جے یو آئی (ف) نے کہا کہ تمام حزب اختلاف اس بات پر متفق ہے کہ ناجائز حکمران کی حکمرانی قبول نہیں کریں گے، آج پوری دنیا میں ہم تنہا رہ گئے ہیں، ان لوگوں نے تو کشمیر کو بھی بیچ دیا اور اب مگرمچھ کے آنسو بہا رہے ہیں، کشمیر کو بیچ کر کشمیریوں سے ہمدردی کی بات کرتے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ سری نگر کو لینے کا تصور ختم ہوچکا ہے، اب تو مظفر آباد کو بچانے کی فکر لگ گئی ہے، آج بھارت گلگت بلتستان کو حاصل کرنے کی باتیں کر رہا ہے۔ مولانا فضل الرحمٰن نے کہا کہ سپریم کورٹ کی طرف سے کہنا ہے کہ پارلیمنٹ قانون سازی کرے، عدالت کا فیصلہ سر آنکھوں پر، لیکن یہ جعلی پارلیمنٹ قانون سازی نہیں کرسکتی، اس لیے تو تمام اپوزیشن جماعتوں کا مطالبہ ہے کہ ملک میں صاف اور شفاف انتخابات کرائے جائیں۔ انہوں نے کہا کہ کہیں نیب تو کہیں ایف بی آر نے احتساب کے نام پر ملک کی معیشت کا پہیہ جام کرکے رکھ دیا ہے، پاکستان کی معیشت کی صلاحیت بیٹھ رہی ہے، نیب کو سیاست کے لیے استعمال کیا جا رہا ہے اور آج دوسروں کو بدعنوان کہنے والوں کی اپنی چوری نکل آئی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ عمران خان غیر ملکی فنڈنگ کیس سے کیوں بھاگ رہے ہیں، ہمارا مطالبہ ہے کہ وہ قوم کو اس پر جواب دیں۔ سربراہ جے یو آئی (ف) کا کہنا تھا کہ مسلمانوں کے خلاف تعصب اور نفرت پھیلائی جا رہی ہے، جس طرح ناروے میں سربازار پولیس کی نگرانی میں قرآن مجید کو نذر آتش کیا گیا، اب آپ بتائیے دنیا میں امن اور نفرت کا مظاہرہ کون کر رہا ہے۔
خبر کا کوڈ : 829627
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش