0
Friday 6 Dec 2019 22:34

نواز لیگ کے رہنماؤں نے ان ہاؤس تبدیلی کیلئے لندن میں سر جوڑ لیے

نواز لیگ کے رہنماؤں نے ان ہاؤس تبدیلی کیلئے لندن میں سر جوڑ لیے
اسلام ٹائمز۔ مسلم لیگ نون نے وزیراعظم کیخلاف تحریک عدم اعتماد لانے کیلئے لندن پلان کی تیاری شروع کر دی ہے۔ نون لیگی رہنماؤں نے ان ہاؤس تبدیلی کیلئے لندن میں سر جوڑ لیے ہیں، نواز لیگ حکومتی اتحادیوں اور ناراض ارکان اسمبلی سے رابطے کرے گی۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق مسلم لیگ نواز کے صدر میاں شہباز شریف نے لندن میں اجلاس طلب کیا ہے، اجلاس میں شرکت کیلئے سینئر لیگی رہنماء خواجہ آصف، سردار ایاز صادق، مریم اورنگزیب لندن پہنچ گئے۔ بتایا گیا ہے کہ صدر نون لیگ شہباز شریف لیگی رہنماؤں کو ان ہاؤس تبدیلی کیلئے اہم ٹاسک سونپیں گے۔ نواز لیگ کی قیادت ان ہاؤس تبدیلی کیلئے اپوزیشن جماعتوں کی حمایت حاصل کرنے کے ساتھ ناراض حکومتی اتحادی جماعتوں سے بھی رابطے کرے گی۔ نون لیگ کے لندن میں ہونے والے اہم اجلاس میں اس حکمت عملی کو عملی جامہ پہنانے کیلئے مشاورت کی جائے گی۔

نواز لیگ نے اگر مناسب سمجھا کہ ان کے پاس ان ہاؤس تبدیلی کیلئے نمبرز پورے ہیں تو مسلم لیگ نون پارلیمنٹ میں وزیراعظم عمران خان کے خلاف تحریک عدم اعتماد لے کر آئے گی۔ اپوزیشن جماعتوں میں پیپلز پارٹی نے پہلے ہی ان ہاؤس تبدیلی کی حمایت کر رکھی ہے۔ دوسری جانب پاکستان مسلم لیگ نواز نے 8 دسمبر کو مہنگائی اور بجلی کی قیمتوں میں اضافے کے خلاف احتجاج کا اعلان کیا ہے۔ سیکرٹری جنرل ن لیگ احسن اقبال نے کہا کہ حکومتی نے غریب اور متوسط طبقے کی زندگی اجیرن کر دی، کہاں گیا بجلی گیس سستی کرنے کا وعدہ؟ انہوں نے ٹویٹر پر اپنے ٹویٹ میں کہا کہ 8 دسمبر بروز اتوار پاکستان مسلم لیگ نواز ملک بھر میں بجلی کے نرخوں میں اضافہ اور ریکارڈ مہنگائی کے خلاف احتجاج کرے گی۔ حکومت کی اقتصادی پالیسیوں نے غریب اور متوسط طبقہ کی زندگی اجیرن کر دی ہے۔ کہاں گیا بجلی اور گیس سستی کرنے کا وعدہ؟ انہوں نے اپنے ایک اور ٹویٹ میں کہا کہ عمران نیازی کے ان غیر ذمہ دارانہ بیانات کی وجہ سے سی پیک جیسے اہم قومی منصوبے کے خلاف بےبنیاد الزامات لگے اور دشمنوں کو پراپیگنڈہ کا موقع ملا۔ قومی منصوبوں پر سیاست کر کے ہم ملک کا نقصان کرتے ہیں۔
خبر کا کوڈ : 831195
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش