0
Sunday 8 Dec 2019 11:08

وفاقی حکومت جی بی میں گندم سبسڈی ختم کرنے کی غلطی نہ کرے، آغا علی رضوی

وفاقی حکومت جی بی میں گندم سبسڈی ختم کرنے کی غلطی نہ کرے، آغا علی رضوی
اسلام ٹائمز۔ مجلس وحدت مسلمین پاکستان گلگت بلتستان کے سیکرٹری جنرل آغا علی رضوی نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ وفاقی اور صوبائی حکومت جی بی میں گندم سبسڈی ختم کرنے کے حوالے سے سوچنے کی بھی غلطی نہ کریں۔ اگر ایسا کوئی عوام دشمن اقدام اٹھایا گیا تو ماضی کی طرح عوام سڑکوں پہ نکل آئیں گے۔ گندم سبسڈی کے سبب عام عوام کی زندگی آسان ہے اور اس کا خاتمہ انکے منہ سے نوالہ چھیننے کے مترادف ہے۔ انہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت کے ذمہ داران کی طرف سے گندم سبسڈی کے خاتمے اور کوٹے میں کمی کی خبریں میڈیا میں گردش کر رہی ہیں، وفاقی حکومت عوام دشمن پالیسی سے باز رہے۔ گلگت بلتستان کے عوام کا مطالبہ ہے کہ آبادی میں اضافے کے ساتھ ساتھ گندم کے کوٹے میں بھی اضافہ کیا جائے۔

ایم ڈبلیو ایم کے صوبائی سربراہ کا کہنا تھا کہ سپریم کورٹ آف پاکستان کے جی بی سے متعلق فیصلے کے بعد نہ صرف گندم سبسڈی کے خاتمے کا قانونی جواز نہیں بنتا بلکہ دیگر اشیائے ضروریہ پر سبسڈی ملنی چاہیے۔ آغا علی رضوی نے کہا کہ وفاق کی طرف سے فراہم کی جانے والی گندم کی کوالٹی پر پہلے ہی تحفظات ہیں اور نون لیگ کی حکومت میں کوٹے میں بھی کمی کی گئی۔ وفاقی حکومت کے ذمہ داران گندم کی کوالٹی کے حوالے سے تحفظات دور کریں اور جی بی کے لیے کوٹہ بڑھانے کے حوالے سے اپنا موقف واضح کریں۔ گلگت بلتستان کے عوام کو گندم ضروریات کے مطابق نہیں مل رہی ہے۔ آغا علی رضوی نے کہا کہ گندم سبسڈی ختم کی گئی تو صرف اسکی بحالی کے لیے ہی نہیں بلکہ اور بھی مطالبات کے ساتھ تاریخی تحریک چلائی جائے گی۔
خبر کا کوڈ : 831455
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش