0
Sunday 15 Dec 2019 21:33

بدترین مہنگائی حکمرانوں کیلئے باعث شرم ہے، معصوم نقوی

بدترین مہنگائی حکمرانوں کیلئے باعث شرم ہے، معصوم نقوی
اسلام ٹائمز۔ جمعیت علمائے پاکستان کے سربراہ قائد اہلسنت پیر معصوم حسین نقوی کی زیر صدارت جے یو پی کی مرکزی شوریٰ اور عاملہ کا مشترکہ اجلاس منعقد ہوا جس میں ملک کی سیاسی صورتحال اور تنظیمی امور پر غور کیا گیا اور قرار دیا کہ موجودہ حکومت نااہل ہے، جے یو پی مہنگائی کیخلاف احتجاجی تحریک چلائے گی اور اتحاد اہل سنت کیلئے کمیٹی بھی تشکیل دی جائے گی۔ اجلاس میں یہ بھی قرار دیا گیا کہ پارلیمنٹ کو بے وقعت ادارہ بنا دیا گیا ہے۔ اجلاس میں مہنگائی، بیروزگاری اور امن وامان کی صورتحال پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا گیا کے عالمی اداروں کی رپورٹس کی بنیاد پر معیشت کے استحکام کے جھوٹے دعوے کئے جا رہے ہیں مگر حقیقت یہ ہے کہ غریب کو کچھ نہیں مل رہا، لوگ روزگار اور روٹی کو ترس گئے ہیں، ان کے چولہے ٹھنڈے ہو رہے ہیں، گوشت اور دالوں کے بعد سبزیاں بھی عام لوگوں کی دسترس میں نہیں رہیں۔ اجلاس میں اس بات پر تشویش کا اظہار کیا گیا اسٹیٹ بینک کی رپورٹ کے مطابق موجودہ حکومت کے دور میں پاکستان کی تاریخ کی بدترین مہنگائی ہوئی ہے جو کہ حکمرانوں کیلئے باعث شرم ہے۔

جمعیت علمائے پاکستان کے مرکزی سیکرٹریٹ لاہور میں ہونیوالے اجلاس میں ڈاکٹر امجد حسین چشتی، پیر غلام رسول اویسی، پیر اختر رسول قادری، صاحبزادی عقیل حیدر شاہ، امیر سلطان چشتی، ملک پرویز اکبر ساقی، علامہ محبوب رضوی، پیر اسلم حیدری، غلام شبیر قادری، خرم شاہ، شفیق شاہ، حسن منصور،گوہر خالد بٹ، چودھری عدنان خورشید، شہباز شبیر، محمد علی، شہباز احمد، پروفیسر ساجد قادری اور دیگر اراکین نے بھی شرکت کی۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ جمعیت علمائے پاکستان کے زیر اہتمام مہنگائی کیخلاف احتجاجی تحریک شروع کی جائے گی۔ اس بات پر تشویش کا اظہار کیا گیا کہ حکومتی جماعت کی نااہلی کی وجہ سے پارلیمنٹ کو بے وقعت ادارہ بنا دیا گیا ہے، حکومت آرڈیننسوں اور عدالتی احکامات کے ذریعے چلائی جا رہی ہے۔ پارلیمان میں مسائل حل نہ ہونے کے باعث لوگ تنازعات کے حل کیلئے عدالتوں سے رجوع کر رہے ہیں۔ جے یو پی کے اجلاس میں زور دیا گیا کہ پارلیمنٹ بالادست ادارہ ہے اور اس کا تقدس بحال رہنا چاہیے۔ اجلاس میں الیکشن کمیشن کی تشکیل پر حکومت اور اپوزیشن کے درمیان ڈیڈ لاک پر بھی تشویش کا اظہار کیا گیا اور زور دیا گیا کہ عمران خان حکومت ضد اور ہٹ دھرمی چھوڑ کر افہام و تفہیم کا راستہ اختیار کرے۔
خبر کا کوڈ : 832921
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش