0
Monday 20 Jan 2020 10:15

آٹے کے بحران نے حکمرانوں کی لاعلمی و نااہلی کا پول کھول دیا ہے، سراج الحق

آٹے کے بحران نے حکمرانوں کی لاعلمی و نااہلی کا پول کھول دیا ہے، سراج الحق
اسلام ٹائمز۔ امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے ملک بھر میں مہنگائی اور بیروزگاری کے خلاف تحریک چلانے کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ عمران خان پہلے کہتے تھے کہ جو حکومت ڈلیور نہ کرے تو اس کو ٹیکس یا بل نہیں دینا چاہیے۔ انہوں نے استفسار کیا کہ آج جب عمران خان کی حکومت ڈلیور نہیں کرپارہی ہے تو کیا ان کی حکومت کو ٹیکس یا بل دینا جائز ہے؟۔ تفصیلات کے مطابق انہوں ںے کہا کہ ملک میں آٹے کے بحران نے حکمرانوں کی لاعلمی و نااہلی کا پول کھول دیا ہے۔ لاہور میں خطاب کے دوران حکومت کو کڑی نکتہ چینی کا نشانہ بناتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ڈیڑھ سال میں ہر چیز اوپر گئی ہے البتہ صرف ایک چیز نیچے آئی ہے اور وہ آمدن ہے۔ امیر جماعت اسلامی پاکستان نے کہا کہ موجودہ حکومت کے دور میں خیر وبرکت اٹھ گئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ مہنگائی، بے روزگاری اور مایوسی کے اندھیروں نے ملک کو چاروں طرف سے گھیر لیا ہے۔

سینیٹر سراج الحق نے کہا کہ آٹے سمیت خوراک کی قیمتوں میں ہوشربا اضافے نے غریب کی کمر توڑ دی ہے۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت نے 15 ماہ میں عوام پر صرف مہنگائی کے کوڑے برسائے ہیں۔ سینیٹر سراج الحق نے خبردار کیا کہ حکومت نے مہنگائی پر قابو پانے کی کوشش نہ کی تو عوام اسے زیادہ دیر برداشت نہیں کریں گے۔ ان کا دعویٰ تھا کہ جماعت اسلامی عوام کے دکھ درد کو اپنا سمجھتی ہے۔ امیر جماعت اسلامی پاکستان نے مطالبہ کیا کہ گندم اور آٹے کے بحران کی تحقیقات ایک کمیٹی سے کرائی جائے جو یہ معلوم کرے کہ آٹے کا بحران کیسے اور کیونکر پیدا ہوا؟ انہوں نے کہا کہ تحقیقاتی کمیٹی میں سامنے والے افراد کو قرار واقعی سزا دی جائے۔
 
خبر کا کوڈ : 839508
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش