0
Monday 20 Jan 2020 22:24

لینڈ ریفارمز ایکٹ عوامی ملکیتی زمینوں کو ہڑپ کرنیکا بہانہ ہے، ایم ڈبلیو ایم جی بی

لینڈ ریفارمز ایکٹ عوامی ملکیتی زمینوں کو ہڑپ کرنیکا بہانہ ہے، ایم ڈبلیو ایم جی بی
اسلام ٹائمز۔ مجلس وحدت مسلمین گلگت بلتستان نے لینڈ ریفارمز ایکٹ پر تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ جی بی کی زمینوں کے حقیقی مالک یہاں کے عوام ہیں۔ لینڈ ریفارمز ایکٹ عوامی ملکیتی زمینوں کو ہڑپ کرنے کا محض ایک بہانہ ہے۔ عوامی ملکیتی زمینوں کو ہڑپ کرنے کی ہرگز اجازت نہیں دینگے۔ ایم ڈبلیو ایم جی بی کے سیکرٹری جنرل سید علی رضوی کی قیادت میں ایم ڈبلیو ایم کے وفد نے چیف سیکرٹری گلگت بلتستان خرم آغا سے ملاقات کی۔ وفد میں حاجی رضوان علی ممبر جی بی اسمبلی، محمد الیاس صدیقی، شیخ اصغر طاہری، عارف قنبری، غلام عباس اور میرباز علی شامل تھے۔ ملاقات میں سید علی رضوی نے چیف سیکرٹری کو لینڈ ریفارمز ایکٹ سے متعلق اپنے تحفظات سے آگاہ کیا۔

انہوں نے کہا کہ جی بی کے جغرافیہ کا ہر صورت تحفظ کرینگے اور کسی کو یہاں کے عوام کی زمینوں کو چھیننے کی ہرگز اجازت نہیں دی جائیگی۔ اگر کسی نے زبردستی زمینوں کو چھینے کی کوشش کی تو مزاحمت کا راستہ اختیار کیا جائیگا۔ اس ملاقات میں جی بی میں فورتھ شیڈول اور انسداد دہشت گردی ایکٹ کے بےجا استعمال پر بھی تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے مطالبہ کیا گیا کہ اے ٹی اے اور فورتھ شیڈول کے بے جا استعمال کو روکا جائے۔ انہوں نے کہا کہ فورتھ شیڈول اور اے ٹی اے کے بیجا استعمال سے پورے علاقے کا امیج متاثر ہو رہا ہے۔ اس موقع پر چیف سیکرٹری نے یقین دلایا کہ حکومت اس سلسلے میں عوامی تحفظات کو دور کرنے کی کوشش کرے گی۔ سید علی رضوی نے سکردو سے گرفتار افراد کے حوالے سے کہا کہ اس ایشو کو عمائدین کے ساتھ بیٹھ کر حل کیا جائے۔ وفد نے چیف سیکرٹری سے ملازمتوں میں میرٹ کو یقینی بنانے کیلئے فوری اقدامات کا مطالبہ کیا۔
خبر کا کوڈ : 839658
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش