0
Saturday 8 Feb 2020 23:00

سندھ حکومت اور وفاق کا مالی تنازع، صوبے کے ترقیاتی منصوبوں کے فنڈز روک دیئے گئے

سندھ حکومت اور وفاق کا مالی تنازع، صوبے کے ترقیاتی منصوبوں کے فنڈز روک دیئے گئے
اسلام ٹائمز۔ وفاق اور سندھ حکومت کے درمیان انتظامی مالی امور پر تنازع سندھ میں جاری ترقیاتی منصوبوں کے فنڈز روک دیئے گئے، سالانہ صوبائی ترقیاتی پروگرام میں شامل اسکیموں کیلئے روانہ سہ ماہی میں فنڈز کا اجرا نہیں کیا جا رہا، وفاق سے این ایف سی اور دیگر مد میں ملنے والے شیئر میں 128 ارب روپے کم موصول ہوئے ہیں، جس کے باعث سندھ حکومت نے غیر ترقیاتی مصارف میں بھی کٹوتی کا فیصلہ کیا ہے۔ رواں مالی سال میں سندھ حکومت کے بیشتر قیاتی منصوبے مکمل نہیں ہو سکیں گے۔ اس ضمن میں ترجمان سندھ حکومت بیرسٹر مرتضیٰ وہاب کا کہنا ہے کہ وفاق سے فنڈز نہ ملنے پر پہلے مرحلے میں نئے منصوبوں کے فندز روکے جا رہے ہیں، سندھ حکومت کو رواں مالی سال کے 7 ماہ میں 487 ارب روپے ملنا تھے۔ فنڈز روکے جانے سے سندھ حکومت کے امور بری طرح متاثر ہو رہے ہیں، وفاقی حکومت ہوش کے ناخن لے اور فندز کا اجرا کرے۔ مرتضیٰ وہاب نے کہا کہ وفاق کی متعصبانہ پالیسی کی وجہ سے سندھ کے جاری اور نئے منصوبے ٹھپ ہو رہے ہیں، پی ٹی آئی کی وفاقی حکومت ٹیکس وصولیوں میں بری طرح ناکام ہو چکی ہے۔
خبر کا کوڈ : 843415
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش