1
Friday 28 Feb 2020 23:57

شام کے جنوبی علاقوں سے بڑی مقدار میں تُرک اسلحہ برآمد

شام کے جنوبی علاقوں سے بڑی مقدار میں تُرک اسلحہ برآمد
اسلام ٹائمز۔ عرب نیوز چینل المیادین کے مطابق شامی سکیورٹی فورسز نے جنوبی علاقوں میں موجود دہشتگردوں کے خفیہ ٹھکانوں سے بڑی مقدار میں اسلحہ برآمد کر لیا ہے جس کا ایک بڑا حصہ ترک اسلحے پر مشتمل ہے۔ دہشتگردوں کے قبضے سے بڑی مقدار میں برآمد ہونے والے اس اسلحے میں انواع و اقسام کی بندوقیں، مشین گنیں، ٹینک کے گولے، زمین سے ہوا میں مار کرنے والے راکٹس اور مارٹر گولے شامل ہیں۔ شام کے جنوبی علاقوں میں موجود دہشتگردوں کے خفیہ ٹھکانوں سے اسلحے کے ساتھ ساتھ متعدد ڈرونز اور لمبے رینج کے حامل مواصلاتی سسٹمز بھی برآمد ہوئے ہیں۔ شامی ذرائع کے مطابق صوبہ ادلب میں موجود تُرک حمایت یافتہ بین الاقوامی دہشتگرد کندھے سے فائر کئے جانے والے امریکی ساختہ میزائلز، شامی و روسی جنگی طیاروں کو نشانہ بنانے کے لئے استعمال کرتے تھے۔

واضح رہے کہ شامی افواج اور عوامی مزاحمتی فورسز نے ڈیڑھ ماہ کے عرصے سے شام کے شمالی علاقوں میں ترکی کے حمایت یافتہ تحریر الشام (جبہۃ النصرۃ) اور دوسرے دہشتگرد گروہوں کے خلاف وسیع اور انتہائی موثر آپریشن شروع کر رکھا ہے جبکہ چند دنوں سے صوبہ ادلب کے اہم شہر سراقب کے اردگرد دہشتگردوں کے علاوہ ترک فوج کے ساتھ بھی شامی افواج کا سامنا ہے۔ شامی افواج اور عوامی مزاحمتی فورسز کی طرف سے شام کے شمال مغربی علاقوں میں موجود دہشتگردوں کے آخری ٹھکانوں کی طرف پیشقدمی نے انکرہ اور دمشق کے درمیان ایک نئے تناؤ کو جنم دیا ہے جس کی ایک بڑی وجہ دہشتگردوں کے ٹھکانوں پر شامی افواج کے ہوائی حملوں میں اُن ٹھکانوں کے اندر موجود تُرک فوجیوں کا مارا جانا ہے۔ دہشتگردوں کے ٹھکانوں میں ترک فوجیوں کے مارے جانے کا آخری واقعہ ایک روز قبل ہی وقوع پذیر ہوا جب "جبل الزاویہ" نامی شہر میں واقع دہشتگردوں کے ٹھکانوں پر شامی افواج کی بمباری میں ترکی کے 34 فوجی بھی دہشتگردوں کے ہمراہ مارے گئے تھے۔
خبر کا کوڈ : 847397
رائے ارسال کرنا
آپ کا نام

آپکا ایمیل ایڈریس
آپکی رائے

منتخب
ہماری پیشکش